کرم ایجنسی میں آپریشن افغانستان سے اغوا ہونے والا کینیڈین‘ امریکی اہلیہ‘ 3 بچے بازیاب

راولپنڈی (نوائے وقت رپورٹ+ نیٹ نیوز) وفاق کے زیر انتظام قبائلی علاقے (فاٹا) میں آپریشن کے دوران پاک فوج نے پانچ غیر ملکی مغویوں کو دہشت گردوں کے قبضے سے بازیاب کرا لیا۔ پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ (آئی ایس پی آر) کے جاری بیان کے مطابق پاک فوج نے جن 5 غیرملکی مغویوں کو بازیاب کرایا ان میں ایک کینیڈین، اس کی امریکی نژاد بیوی اور 3 بچے شامل ہیں۔ آئی ایس پی آر کے مطابق پانچوں مغویوں کو 2012 میں افغانستان سے اغوا کیا گیا تھا اور انہیں امریکہ کے ساتھ ہونے والی انٹیلی جنس شیئرنگ کے بعد کرم ایجنسی سے بازیاب کرایا گیا۔ آئی ایس پی آر نے بیان میں کہا مغویوں کو افغانستان سے پاکستان منتقل کیا جارہا تھا جبکہ بازیاب کرائے جانے والے تمام مغویوں کو متعلقہ ممالک منتقل کیا جارہا ہے۔ واضح رہے آئی ایس پی آر نے اپنے بیان میں بازیاب کرائے گئے غیر ملکی جوڑے کی شناخت ظاہر نہیں کی تاہم خیال ظاہر کیا جارہا ہے یہ وہی جوڑا ہے جس کی ویڈیو 21 دسمبر 2016 کو طالبان کی جانب سے نشر کی گئی تھی۔ مغویوں کو کینیڈا منتقل کیا جا رہا ہے۔ بی بی سی کے مطابق بیان کے مطابق امریکی حکام نے 11 اکتوبر کو پاکستان فوج کو انٹیلی جنس فراہم کی تھی کہ ان افراد کو کرم ایجنسی کی سرحد کے ذریعے پاکستان منتقل کیا جا رہا ہے۔ امریکی خفیہ ادارے ایک عرصہ سے ان کی تلاش میں تھے۔ بیان میں کہا گیا ہے امریکی حکام کی جانب سے دی جانے والی خفیہ اطلاعات قابل عمل تھیں اور ان کی بنیاد پر کیا گیا آپریشن کامیاب رہا اور تمام مغوی بحفاظت بازیاب کروا لیے گئے۔ اگرچہ پاکستانی فوج کی جانب سے بازیاب کروائے افراد کے نام ظاہر نہیں کیے گئے تاہم 2012 میں افغانستان سے ایک جوڑے جوشوا بوئلے اور ان کی بیوی کیٹلان کولمین کو اغوا کیا گیا تھا۔ فوج کے بیان میں یہ بھی کہا گیا ہے اس کامیاب آپریشن سے ظاہر ہوتا ہے خفیہ معلومات کا بروقت تبادلہ کس قدر اہم ہے اور یہ کہ پاکستان مشترکہ دشمن کے خلاف دونوں ممالک کی افواج کے تعاون سے جنگ جاری رکھنے کے لیے پرعزم ہے۔
واشنگٹن (نوائے وقت رپورٹ+ اے ایف پی) امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے پاک فوج اور امریکی اہلکاروں کی جانب سے 5 غیرملکیوں کی بازیابی پر پاکستان کی تعریف کی ہے۔ صدر ٹرمپ نے کہا غیرملکیوں کی بازیابی پاکستان امریکہ تعلقات میں مثبت لمحہ ہے امید ہے دونوں ممالک میں دہشت گردی کے خلاف تعاون جاری رہے گا۔ دیگر مغویوں کی بازیابی کیلئے بھی ٹیم ورک جاری رہنے کی امید ہے۔ وائٹ ہائوس سے جاری بیان کے مطابق امریکی صدر نے کہا جوڑے کو حقانی نیٹ ورک نے اغوا کیا۔ امریکی صدر نے بازیاب ہونے والوں کی شناخت ظاہر کرتے ہوئے بتایا امریکی شہری کیٹلان کولمن اور اسکے کینیڈین شوہر جوشوا بوئلے اور ان کے 3 بچوں کو امریکہ اور پاکستانی حکام نے طالبان کی قید سے بازیاب کرایا۔ ٹرمپ نے کہا یہ تعاون اشارہ ہے پاکستان خطے میں سکیورٹی کیلئے ڈومور کی امریکی خواہش کا احترام کرتا ہے مستقبل میں یہ تعاون‘ ٹیم ورک دہشتگردی کیخلاف مشترکہ کارروائیوں میں بھی مددگار ہو گا۔