وزےراعلیٰ کا لاہور نالج پارک بھرتےوں اورخرےداری کے عمل مےں بے ضابطگےوں کا سخت نوٹس

22 فروری 2017

لاہور (صباح نیوز)وزےراعلیٰ شہبازشرےف کی زےر صدارت ےہاں4 گھنٹے طوےل اجلاس منعقد ہوا،جس مےںلاہور نالج پارک کمپنی کے مختلف امورکا تفصےلی جائزہ لےاگےا۔ وزےراعلیٰ نے بھرتےوں اورخرےداری کے عمل مےں بے ضابطگےوں کا سخت نوٹس لےتے ہوئے مےرٹ کے برعکس تمام بھرتےاں فی الفور منسوخ کرنے اورقواعد و ضوابط کے برعکس خرےداری کے عمل کو بھی فوری طورپر روکنے کا حکم دےا۔ وزےراعلیٰ نے خلاف ضابطہ بھرتی ہونےوالے افراد کو ملازمت سے فوری طورپرنکالنے کی بھی ہداےت کی۔ فرائض کی انجام دہی مےں غفلت بھرتنے پر چےف اےگزےکٹو آفےسر لاہورنالج پارک کمپنی پر سخت برہمی کا اظہار۔ شہبازشرےف نے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ پنجاب حکومت نے ہر جگہ مےرٹ اورشفافےت کو فروغ دےا ہے اورمےں نے آج تک مےرٹ اورشفافےت پر کوئی سمجھوتہ نہےں کےا،اس لئے سرکاری افسران کو مےرٹ اور شفافےت کی پالےسی کی خلاف ورزی نہےں کرنے دوں گا۔ انہوںنے کہا کہ وسائل قوم کی امانت ہےں جو ان مےں خےانت کرے گااسے قانون کے مطابق سزا ملے گی۔ انہوںنے کہا کہ 7روز کے اندر لاہورنالج پارک کمپنی مےں ہونےوالی بے ضابطگےوںکے حوالے سے حتمی رپورٹ پےش کی جائے اورغفلت کے ذمہ داروں کا تعےن کےا جائے۔ انہوںنے کہا کہ اگر آئندہ مےرٹ کی خلاف ورزی ہوئی تو متعلقہ محکمے کے سےکرٹریز اور کمپنےوں کے بورڈ ممبران ذمہ دار ہوں گے۔