ایشیائی بینک سندھ میں 6 سڑکوں کی اپ گریڈیشن کیلئے 200 ملین ڈالر دیگا

16 نومبر 2014

اسلام آباد (عترت جعفری) ایشیائی ترقیاتی بنک آئندہ سال سندھ میں سڑکوں کی بہتری کے منصوبے کے تحت 6سڑکوں کی اپ گریڈیشن کے لئے 200ملین ڈالر دے گا۔ یہ سڑکیں 398کلومیٹر طویل ہیں جبکہ حکومت سندھ نے افقی سڑکوں کو معاشی کوریڈور کی بڑی شاہراہوں سے ملانے کے لئے 9منصوبے پیش کئے ہیں اور درخواست کی ہے کہ ملکی حکمت عملی میں ان منصوبوں کو شامل کرکے 400ملین ڈالر کا قرضہ دیا جائے۔ صوبے کی 47ہزار کلومیٹر صوبائی سڑکوں کی مرمت بڑا ایشو ہے۔ اے ڈی بی کو سڑکوں کے انفراسٹرکچر کی تعمیر کے لئے پبلک پرائیویٹ شراکت کا تصور دیا ہے تھر کو ساحلی اور ملک کی دوسری شاہراہوں سے ملایا جائے گا۔ ان خیالات کا اظہارسندھ کے سیکرٹری ورکس قاضی شاہد پرویز نے صحافیوں سے ملاقات میں کیا۔ قاضی شاہد پرویز نے کہا کہ ایشیائی ترقیاتی بنک ہمارا بااعتماد پارٹنر ہے۔ ہم شفاف رہنا چاہتے ہیں اور کمزوریوں کو چھپانا نہیں چاہتے۔ اقتصادی امور ڈویژن میں جب منصوبوں پر بات ہوتی تھی تو اے ڈی بی نے سندھ کو پنجاب پر ترجیح دی۔ انہوں نے کہا کہ سڑکوں کی مرمت کرنا بڑا ایشو ہے۔فی کلومیٹر ایک لاکھ 47ہزار روپے لاگت آتی ہے۔ اتنے وسائل صوبے کے پاس نہیں ہیں روڈ منیجمنٹ کے بھی ایشوز ہیں۔
اے ڈی بی