سی پیک سے دنیا کی 80 فیصد آبادی کا مستقبل منسلک ہے، ناصر جنجوعہ

17 اپریل 2018

اسلام آباد (سٹاف رپورٹر) قومی سلامتی کے مشیر لیفٹیننٹ جنرل (ر)ناصر جنجوعہ نےکہا ہے کہ امن عالم کا راستہ پاکستان سے ہو کر گزرتا ہے۔ بلوچستان کم از کم آٹھ ملکوں کے ساتھ تجارت کی گزرگاہ بنے گا۔معاشی راہداری منصوبہ سے خطہ میں خوشحالی آئے گی۔ پاکستان میں سرمایہ کاری کے حوالہ سے پیر کے روز منعقدہ کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ پاکستان تعاون کا علم بردار ہے۔ معاشی راہداری منصوبے سے دنیا کی اسی فیصد آبادی کا مستقبل منسلک ہے۔ راہداری منصوبہ کے تحت بلوچستان میں گوادر،پسنی اور جیوانی سمیت چار بڑے شہر آباد ہوں گے دنیا ان شہروں کا رخ کرے گی۔انہوں نے کہا کہ پاکستان نے افغان جنگ سے لے کر آج تک ہر چیلنج کا ڈٹ کر مقابلہ کیا، ہمیں فاٹا، کراچی اور بلوچستان میں چیلنج کیا گیااور ہم ہر امتحان میں سرخرو ہوئے، پاکستان نہ صرف سرمایہ کاری بلکہ معاشی مرکز بن کر ابھر رہا ہے،پاکستان مواقعوں کی سرزمین ہے اور امن و امان کی بہتر ہوتی ہوئی صورتحال نے یہ ثابت کردیا ہے،پاکستان جنوبی ایشیائ، وسطی ایشیائ، افریقہ، یورپ و دیگر خطوں کےلئے راہداری ہے ہم بنیادی کامیابیاں حاصل کر چکے ہیں جن کی بنیاد پر مستقبل کو روشن کرنا ہے،دہشتگردی کےخلاف جنگ میں پاکستان نے اپنے وسائل سے زیادہ خرچ کیا،عالمی برادری پاکستان کا ساتھ دے۔
ناصر جنجوعہ