محکمہ جنگلات باغ کا قبضہ مافیا کے خلاف آپریشن

16 اپریل 2018

باغ(نامہ نگار)محکمہ جنگلات باغ کا آپریشن راولاکوٹ اور باغ کے سنٹر شہید گلہ اور ڈنہ نمبر 4میں بنائے گئے سرکاری جنگل میں پختہ مکان اور شیڈ مسمار کر کے درجنوںکنال اراضی واگزار کروانے میں کامیاب کوئی کتنا ہی بااثرکیوں نہ ہوسرکاری جنگل میں قبضہ کرنے کی اجازت نہیں دیں گے گزشتہ دنوں وزیر جنگلات سردار میر اکبر خان کو کسی نے شکایت کی کے سرکاری جنگل میں مکانات تعمیر ہو رہے ہیں تو وزیر جنگلات سردار میر اکبر خان نے مہتمم جنگلات باغ کو ہدایت کی مکانات کا جائزہ لے کر غیر قانوی مکانات کو ایک ہفتہ کے اندر مسمار کر کے رپورٹ کریں تو مہتمم جنگلات باغ سید طاہر علی شاہ نے فوری ایکشن لیتے ہوئے رینج آفیسر راجہ جہانگیر کی نگرانی میں ایک ٹیم تشکیل دی ٹیم میں سردار بصیر خان،سردار طارق خان،چوہدری بشیر،عبید الرحمن ،آصف رشید،محمد نسیم،مختار انجم،محمد حنیف خان،عابد خان،طاہر مختار،محمد شوکت، چوہدری اشرف، افتخارخان، راجہ نثار ودیگرشامل تھے جنہوں نے کمال مہارت کے ساتھ مکانات گرانے میں بھرپور کردار ادا کیا اور وزیر جنگلات کے نوٹس تین دن کے پہلے 24گھنٹے میں آر سی سی پختہ مکانات مسمار کر دئیے جس پر باغ کے عوامی حلقوں نے محکمہ کی اس شاندار کامیابی پر ڈی ایف او سید طاہر علی شاہ اور ان کی پوری ٹیم کو مبارکباد پیش کی ہے۔ انہوں نے سرکاری جنگل میں مداخلت کرنے والوں کے خلاف سخت ایکشن لیا اس موقع پر مقامی لوگوں نے بھرپور مذمت کی جس کی پروا نہ کرتے ہوئے مکانات گہرا کر سرکاری جنگل سے ان کو بے دخل کر دیا۔