گورنمنٹ ضیاء العلوم سکول کی اراضی پر قبضہ کرنے کی اجازت نہیں دیں گے،اساتذہ تنظیمیں

راولپنڈی ( نیوز رپورٹر) اساتذہ تنظیموں نے راجہ بازار میں واقع گورنمنٹ ضیاء العلوم ہائی سکول سمیت دیگر سرکاری سکولوں پر قبضہ کی کوششوں کی شدید مذمت کرتے ہوئے اعلان کیاہے کہ سرکاری سکولوں پر قبضہ مافیاکو کسی صورت کامیاب نہیں ہونے دینگے،سکولوں کو بچانے کے لیے بڑ ی احتجاج تحریک بھی چلاناپڑی تو پیچھے نہیں ہٹیں گے ،محکمہ ایجوکیشن اور ضلعی حکومت کے افسران ایکشن لیں ورنہ انکے خلاف بھی ایکشن لیں گے ،قبضہ مافیااور محکمہ متروکہ وقف املاک کا گٹھ جوڑشہباز شریف حکومت کے لیے ایک چیلنج ہے ۔پریس کلب راولپنڈی میں پنجاب ٹیچر ز یونین کے مرکزی چیئرمین امتیاز عباسی ، ہیڈماسٹر ز ایسوسی ایشن کے جنرل سیکرٹری شیخ طارق ، پنجاب سبجکیٹ ایسوسی ایش کے صدر چوہدری بشارت ، ایجوکیٹرز ایسوسی ایشن کے صدر ملک امجد ،ایس ای ایس ایسوسی ایشن کے صدر چوہدری دائود کے علاوہ پی ٹی یو کے ضلعی صدر راجہ شاہد مبارک ،محمد سجاد، عبداللہ خان ،راجہ طاہر ، حامد علی شاہ ، بشارت اقبال ، قاضی عمران ،ظہیر الدین بابر،راجہ اورنگزیب ،عظمت عباسی ، زاہدمحمد خان ، عمر جاوید ، فرمان عباسی اور دیگرنے کہاکہ گورنمنٹ ضیاء العلوم سکول کی اراضی پر محکمہ متروکہ وقف املاک کے ڈپٹی ایڈمنسٹریٹر آصف خان قبضہ کرنااور کرواناچاہتے ہیں اختیارات کے ناجائز استعمال کررہے ہیں ، یہی وجہ ہے کہ وہ ہربار سکول میں ہونے والے کاموں پر حکم امتناہی لے لیتے ہیں ،بوسیدہ کمروں کی ازسرنوتعمیرمیں وہی اصل رکاوٹ ہیں، بچے کھلے آسمان تلے تعلیم حاصل کرنے پر مجبور ہیں ، ہم اپنے سکولوں کی حفاظت کے لیے اکٹھے ہوچکے ہیں ، پانچ نومبر تک مہلت دیتے ہیں کہ ڈپٹی ایڈمنسٹریٹر آصف خان کو معطل کرکے اسکے اثاثہ جات کی چھان بین کی جائے اور سکولوں پر ہونے والے قبضے کو واگزار کروایاجائے۔