پنجاب یونیورسٹی: طلبہ، طالبات کے اکٹھے بیٹھنے پر 2 گروپوں میں تصادم، 2 زخمی

لاہور (سٹاف رپورٹر) پنجاب یونیورسٹی میں طلبہ گروپوں میں تصادم ہو گیا لڑائی جھگڑے کے دوران شعبہ علوم ابلاغیات کے داخلی دروازے کے شیشے بھی ٹوٹ گئے۔ سی سی ٹی وی کیمروں کی مدد سے ہنگامہ آرائی کرنے والوں کی تلاش شروع کر دی گئی۔ واقعہ کے بعد ڈیپارٹمنٹ میں خوف وہراس پھیل گیا اور طلبہ شدید پریشان ہو گئے۔ معلوم ہوا ہے پنجاب یونیورسٹی کے شعبہ ابلاغیات میں طلباء اور طالبات اکٹھے بیٹھے جس پر طلبہ تنظیم کے کارکنوں نے پوچھ گچھ کی تو تلخ کلامی ہو گئی جس پر 2 طلبہ تنظیموں کے درمیان ہاتھا پائی ہو گئی جس سے 2 طلبہ معمولی زخمی ہو گئے۔ اطلاع ملتے ہی پولیس بھی موقع پر پہنچ گئی جس پر دونوں گروپوں کے طلبہ موقع سے غائب ہو گئے پنجاب یونیورسٹی کے وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر مجاہد کامران بھی ادارہ علوم ابلاغیات پہنچ گئے اور واقعہ میں ملوث طلبہ کیخلاف کارروائی کی ہدایت کی۔ یونیورسٹی انتظامیہ کی جانب سے اندراج مقدمہ کی درخواست بھی دیدی گئی ہے پنجاب یونیورسٹی کے ترجمان نے واقعہ کی مذمت کرتے ہوئے کہا غنڈہ گردی میں ملوث طلبہ کے خلاف قانون کے مطابق سخت کارروائی کی جائے گی۔