سی پی او کا اردل روم، 7 پولیس افسران کی سزائیں ختم، 6 میں کمی، 13 کی اپیلیں مسترد

31 جنوری 2018

ملتان (خبر نگار خصوصی) سٹی پولیس آفیسر ملتان کا اپنے دفتر میں اردل روم کا انعقاد۔ اس دوران 34 پولیس افسران پیش ہوئے۔ اردل روم میں 26 ملازمان کی اپیلیں شامل کی گئیں۔ جن میں 7 افسران کی اپیلیں منظور کرتے ہوئے سزائیں ختم کر دیں۔ سابقہ کنسٹیبلان محمد بلال، اقبال حسین، شاہد افضال کو ڈسمس سے بحال کیا گیا۔ 13 پولیس افسران کی اپیلیں مسترد کر دی گئیں۔ 6 پولیس افسران کی اپیلوں پر سزا میں کمی کی گئی۔ اردل روم میں 5 افسران جن میں سب انسپکٹر شوکت علی، سب انسپکٹر سجاد، اسسٹنٹ سب انسپکٹر ضیاء اختر، کنسٹیبلان عطاء اللہ اور ظفر شاہ کی سروس ضبط کی گئی۔ فرائض میں غفلت برتنے پر اسسٹنٹ سب انسپکٹر عبدالمالک، اسسٹنٹ سب انسپکٹر منظور حسین کو ایک درجہ تنخواہ تنزلی کی سزا دی گئی۔ 2 افسران محمد اشرف اور غلام مصطفیٰ کو اختیارات سے تجاوز کرنے پر سب انسپکٹر سے اسسٹنٹ سب انسپکٹر بنا دیا۔ ٹریفک وارڈن عقیل احمد کو غیر حاضری کرنے پر نوکری سے برخاست کر دیا جبکہ اسسٹنٹ سب انسپکٹر شوکت علی کی ایک سال کے لئے ترقی روک لی گئی۔ کنسٹیبل نوید ارشد کو 6 ماہ ضبطی سے وارننگ میں سزا تبدیل کر دی گئی۔