ہاکی کے زوال کا سبب ٹیلنٹ کی عدم دستیابی ہے‘ شہباز سینئر کی منطق

31 جنوری 2018

اسلام آباد(آئی این پی)قومی اسمبلی کی قائمہ کمیٹی برائے بین الصوبائی رابطہ میں پاکستان ہاکی فیڈریشن (پی ایچ ایف ) کے سیکر ٹری شہباز سینئر نے قومی کھیل ہاکی کے زوال کا ذمہ دار نوجوان ٹیلنٹ کا سامنے نہ آنے کو قرار دیدیا۔پی ایچ ایف سیکر ٹری شہباز سینئر نے کہا کہبچوں کی زیادہ توجہ کرکٹ پر ہے کوئی ہاکی کھیلنا ہی نہیں چاہتا،سکولز اور کالجز میں ہاکی کا کھیل ختم ہو کر رہ گیا ہے جسکی وجہ سے نیا ٹیلنٹ سامنے نہیں آرہا۔کمیٹی نے ملک میں ہاکی سمیت دیگر کھیلوں کے فروغ کیلئے سپورٹس فیڈریشنز کو ازخود سپانسرز تلاش کرنے کی ہدایت کردی۔قائمہ کمیٹی نے نئے ڈی جی پاکستان سپورٹس بورڈ کی تعیناتی کے معاملے پر سب کمیٹی تشکیل دیدی،سردار شفقت حیات کی سربراہی میں کمیٹی اپنی سفارشات مرتب کریگی ۔منگل کو کمیٹی کا اجلاس چیئرمین عبدالقہار ودان کی زیر صدارت پارلیمنٹ ہائوس میں ہوا،جس میں کمیٹی ارکان کے علاوہ وفاقی وزیر بین الصوبائی رابطہ ریاض حسین پیرزادہ،سیکر ٹری وزارت بین الصوبائی رابطہ ،سیکر ٹری پی ایچ ایف سمیت دیگر متعلقہ حکام نے شرکت کی ۔اجلاس میں پاکستان ہاکی فیڈریشن کی کارکردگی کا جائزہ لیا گیا۔کمیٹی ارکان کا کہنا تھا کہ رکن سردار شفقت حیات نے کہا کہہاکی قومی کھیل ہے لیکن اسکے حالات بہت برے ہیں،ملک میںہاکی کا برا حال ہو چکا ہے ،کرکٹ کی طرح ہاکی کا ٹیلنٹ بھی ہر ضلع سے ڈھونڈا جائے ، ہاکی کے چیمپیئن رہ چکے لیکن آج اس دوڑ میں بہت پیچھے ہیں،ورلڈ ہاکی الیون کا پاکستان آنا خوش آئند ہے ۔سیکرٹری پاکستان ہاکی فیڈریشن شہباز سینئر نے اعتراف کیا کہ سکولز اؤر کالجز میں ہاکی ختم ہو کر رہ گئی ہے ،بچوں کی زیادہ توجہ کرکٹ پر ہے ،نیشنل ہاکی سینٹر کے قیام سے ہاکی میں بہتری آئے گی۔وفاقی وزیر بین الصوبائی رابطہ ریاض حسین پیرزادہ نے کہا کہ ہاکی فیڈریشن کو لاہور سے اسلام آباد منتقل ہونے کا کہا ہے ،ہم ہاکی کھیل کی ترقی چاہتے ہیں ، ہاکی پر ہر جگہ ہماری جواب دہی ہوتی ہے ۔سیر ٹری وزارت بین الصوبائی رابطہ نے کہا کہ ہاکی فیڈریشن پرائیویٹ اسپانسرز کو تلاش کرئے،کھیلوں کے بجٹ میں اضافہ کیا جائے۔اجلاس میںمیں پاکستان سپورٹس بورڈ کے نئے ڈائریکٹر جنرل کی تعیناتی کے معاملے کا بھی جائزہ لیا گیا،وفاقی وزیر ریاض پیرزادہ نے معاملے پر خصوصی پارلیمانی کمیٹی قائم کرنے کی تجویز دیتے ہوئے کہا کہ پاکستان سپورٹس بورڈ میں اس وقت کوئی اہل افسر نہیں جسے ڈی جی تعینات کیا جائے،اہل شخص کی تعیناتی نہ ہوئی تو پاکستان سپورٹس بورڈ میں تباہی مچ سکتی ہے ،کسی سفارشی کو سپورٹس بؤرڈ میں لایا گیا تو وہ بیٹھ ہی جائیگا،کمیٹی نے ڈی جی سپورٹس بورڈ کی تعیناتی کے معاملے پر سب کمیٹی تشکیل دیدی ،سردار شفقت حیات کی سربراہی میں کمیٹی اپنی سفارشات مرتب کرئے گی ،قائمہ کمیٹی نے پاکستان سپورٹس بورڈ کے ڈائریکٹر جنرل اختر نواز گنجیرا کی خدمات کو سراہا ۔