بورڈ کا بگ تھری پر رضا مند ہونا بڑی غلطی تھی‘ ذکا اشرف

31 جنوری 2018

لاہور(سپورٹس رپورٹر) پاکستان کرکٹ بورڈ کے سابق چیئرمین ذکاء اشرف نے کہا ہے کہ بورڈ کے موجودہ عہدیداران کا بگ تھری پر رضا مند ہونا سب سے بڑی غلطی تھی جس کا پاکستان کرکٹ کو نقصان ہو رہا ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ پاکستان انڈر 19 ٹیم کی ورلڈ کپ میں بھارت کے ہاتھوں شکست شرمناک ہے جس میں مجھ سمیت پوری قوم کو افسوس ہوا ہے۔ لاہور میں مقامی اسکول کے زیر اہتمام منعقد ہونے والی ایروبکس چیمپیئن شپ کے اختتام کے موقع پر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے سابق چیئرمین کا کہنا تھا کہ میرے دور میں بھی بگ تھری پر ہمیں ایسے لالچ دیئے گئے تھے لیکن موجودہ کرکٹ بورڈ نے لالچ میں آ کر پاکستان کرکٹ کو نقصان پہنچایا ہے۔ ذکاء اشرف کا کہنا تھا کہ بھارت کے خلاف کیس بگ تھری سے شروع ہوا تھا۔ انہوں نے اس پر مضبوط سٹینڈ لیا جس کا انہیں فائدہ اور ہمیں نقصان ہوا۔ انڈر 19 ورلڈ کپ پر گفتگو کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ نوجوان کھلاڑی پاکستان کرکٹ کا مستقبل ہیں بھارت کے ہاتھوں میگا ایونٹ کے سیمی فائنل میں بھارت کے ہاتھوں 2 سو سے زائد رنز سے شکست لمحہ فکریہ ہے۔ ہار پر مجھے پر دکھ ہوا ہے، 203 رنز کی شرمناک شکست کا کوئی جواز نہیں ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ پاکستان کرکٹ بورڈ کھلاڑیوں کو لیگ کھیلنے کی اجازت قومی مصروفیات کے حوالے سے جائزہ لینے کے بعد دینی چاہیے۔