امیٹھی میں ہندوؤں کے ہاتھوں مسلمان نوجوان قتل ،فسادات پھوٹ پڑے‘ 5 زخمی

31 جنوری 2018

لاہور (نیوز ڈیسک) اتر پردیش کے شہر امیٹھی میں انتہا پسند ہندوؤں نے فائرنگ کرکے مسلمان نوجوان کو قتل کر دیا ،شہر میں فسادات بھڑک اٹھے جن میں مزید 5 افراد شدید زخمی ہو گئے۔ مشتعل افراد نے گاڑیوں اور املاک پر پتھراؤ کیا اور 5 گاڑیاں جلا دیں ،پولیس اور پیرا ملٹری فورسز کی بھاری نفری علاقے میں بھجوا دی ، نوجوان محمد اشفاق کو موٹر سائیکل سواروں نے پرائیویٹ بنک سے باہر نکلتے ہی گولیوں کا نشانہ بنایا، دریں اثناء لکھنؤ کے قریب فساد زدہ شہر کا سگنج میں حالات چوتھے روز بھی کشیدہ رہے۔ یہاں 26 جنوری کو یوم جمہوریہ کا جلوس نکالتے ہوئے انتہا پسند ہندوؤں نے مسلمانوں کو برا بھلا کہا نعرے لگائے جس پر فسادات پھوٹ پڑے اور ایک ہندو لڑکا مارا گیا۔