چکرا گوٹھ میں گٹر ابلنے لگے‘کچرا کنڈی پہاڑ کا منظر پیش کرنے لگی

31 جنوری 2018

کراچی(اسٹاف رپورٹر) کورنگی کے علاقے چکرا گوٹھ میں کچرے کے ڈھیروں کا خاتمہ نہ ہوسکا۔ صفائی و ستھرائی کا نظام بہتر بنانے کے لئے بلدیہ کورنگی نے کوئی اقدامات بروئے کار نہیں لائے جبکہ واٹر بورڈ نے بھی فراہمی و نکاسی آب کی شکایات کا ازالہ نہیں کیا۔تفصیل کے مطابق کورنگی کے علاقے چکرا گوٹھ میں صفائی و ستھرائی کے ناقص انتظامات کی وجہ سے جگہ جگہ کچرے کے ڈھیر لگے ہوئے ہیں۔ کھیل کے میدان میں بنائی گئی کچرہ کنڈی سے کچرہ نہیں اٹھایا گیا جوکہ ایک پہاڑ کا منظر پیش کررہی ہے۔ چیئرمین بلدیہ کورنگی سید نیئر رضا کے دعوے کے مطابق کورنگی میں صفائی ستھرائی کے نظام کو بہتر بنانے کے لئے جنگی بنیادوں پر اقدامات بروئے کار لائے جارہے ہیں جبکہ چکرا گوٹھ سے سوتیلی ماں جیسا سلوک کیا جارہا ہے۔ کچرہ کنڈی کی ایک سال کے دوران صفائی نہیں کی گئی۔ جہاںکچرا ایک پہاڑ کا منظر پیش کررہا ہے۔ مہینے میں ایک ٹرک کا برائے نام کچرا اٹھایا جارہا ہے جبکہ نکاسی آب کی شکایات کا بھی ازالہ نہیں کیا گیا۔ گٹر ابلنے سے کھیل کا میدان تالاب کا منظر پیش کررہا ہے۔ گٹر ابل کر پانی گلیوں میں بہہ رہا ہے۔ جس سے مکینوں کو شدید پریشانی کا سامنا ہے۔ مکینوں نے چیئرمین بلدیہ کورنگی سید نیئر رضا ایم ڈی واٹر بورڈ سید ہاشم رضا زیدی سے مطالبہ کیا ہے کہ چکرا گوٹھ میں صفائی کے انتظامات کئے جائیں۔ یہ آبادی بھی کورنگی کا حصہ ہیں صرف زبانی نہیں عملی اقدامات کئے جائیں۔