ڈرون حملوں کیخلاف تحریک انصاف کے دھرنے جاری‘فوجی آپریشنوں کا کوئی فائدہ نہیں ہوا، امن مذاکرات سے ہی ہو گا: شرکا ئ

Jan 31, 2014

پشاور(این این آئی) تحریک انصاف کے ڈرون حملوں کیخلاف دھرنے کو 69روز مکمل ہو گئے۔ مقررین نے کارکنان سے خطاب کرتے ہوئےکہا فوجی آپریشن ہوتے رہے تاہم اس کا کوئی فائدہ نہیں ہوا، مذاکرات کے ذریعے ہی ملک میں امن قائم کیا جا سکتا ہے۔عرات کو دھرنے کے 69ویں روز پی کے 7پشاور کے کارکنان نے ایم پی اے محمود جان اور بابائے دھرنا فیاض خلیل کی قیادت میں دھرنا دیا۔ اس موقع پر اقلیتی رہنما ارنسٹ نہال اور اتحادی جماعتوں کے کارکنان بھی موجود تھے۔ کارکنان نے ڈرون حملوں کیخلاف احتجاجی مظاہرہ اور نعرے بازی کی۔ کارکنان سے خطاب کرتے ہوئے رہنماﺅں نے کہا کہ نو سال سے زیادہ ملک میں فوجی آپریشن ہوتے رہے تاہم اس کا کوئی فائدہ نہیں ہوا نہ امن قائم ہوا اور نہ ہی آپریشن کامیاب ہوئے۔ تحریک انصاف ہمیشہ سے آپریشنوں کی مخالفت کرتی آئی ہے جس پر ہمیں طالبان حامی کہا جاتا رہا لیکن آج ایک مرتبہ پھر ثابت ہو گیا کہ تحریک انصاف کا روز اول کا موقف ہی درست تھا اور مذاکرات کے ذریعے ہی ملک میں امن قائم کیا جا سکتا ہے۔ تحریک انصاف اور اس کی صوبائی حکومت امن کے قیام کیلئے وزیر اعظم کی جانب سے مذاکرات کے لئے کمیٹی کے قیام کا خیر مقدم کرتی ہے۔ انہیں امید ہے کہ اس اقدام کے بعد ملک میں حالات امن کی جانب بڑھیں گے۔

تحریک انصاف دھرنا

مزیدخبریں