وفاقی شرعی عدالت کی پہلی خاتون جج اشرف جہاں نے حلف اٹھا لیا

31 دسمبر 2013

کراچی (این این آئی +  اے ایف پی) سندھ ہائی کورٹ کی ایڈیشنل جج اشرف جہاں نے وفاقی شرعی عدالت کی جج کے طور پر حلف اٹھالیا ہے۔ حلف برداری کی تقریب سندھ ہائی کورٹ میں منعقد ہوئی جس میں وفاقی شرعی عدالت کے چیف جسٹس جسٹس آغا رفیق احمد خان نے ان سے حلف لیا۔ اشرف جہاں کے حلف اٹھانے کے بعد وفاقی شرعی عدالت میں ججوں کی تعداد 7 ہوگئی ہے جبکہ اب بھی وفاقی شرعی عدالت میں ایک جج کی اسامی خالی ہے۔ تقریب حلف برداری میں چیف جسٹس سندھ ہائی کورٹ جسٹس مقبول باقر، سپریم کورٹ کے جج جسٹس انور ظہیر جمالی سمیت سندھ ہائی کورٹ کے دیگر معزز ججوں، بار عہدیداروں اور دیگر اعلیٰ حکام نے شرکت کی۔ اے ایف پی کے مطابق 56 سالہ اشرف جہاں وفاقی شرعی  عدالت کی 33 سالہ تاریخ میں پہلی خاتون جج مقرر ہوئی ہیں۔ چیف جسٹس  وفاقی  شرعی عدالت  آغا رفیق احمد  نے بتایا یہ ایک تاریخی  حلف برداری  ہے کہ ملک کی ایک قابل  خاتون  شرعی عدالت  میں شامل ہو رہی ہیں۔