صدر ممنون کی تصاویر پر قومی خزانے سے 15 لاکھ روپے خرچ

31 دسمبر 2013

اسلام آباد (ایجنسیاں +  نوائے وقت رپورٹ) صدر ممنون حسین کی تصاویر پر قومی خزانے سے 15لاکھ روپے خرچ کر دیئے گئے،  تصاویر کیلئے لاہور کے فوٹو گرافر کی خدمات حاصل کی گئیں، صدر کے پورٹریٹ ایوان صدر کے ہال اور لابیوں میں آویزاں کئے گئے ہیں۔ نجی ٹی وی کے مطابق موجودہ حکومت نے  ایوان صدر اور وزیراعظم ہائوس کے اخراجات میں 30فیصد کمی  کا اعلان کیا تھا مگر صورتحال اس کے برعکس ہے  کیونکہ  محض ایوان صدر میں لگوانے کیلئے صدرکی تصاویر پر 15لاکھ روپے خرچ کردیئے گئے۔ یہ  تصاویر بنوانے کے لئے لاہور کے فوٹو گرافر قمر پرویز کی خدمات حاصل کی گئی تھیں،  فوٹو گرافر کی طرف سے 15لاکھ روپے کا بل ایوان صدر کو بھجوایا گیا ہے۔ فوٹو گرافر قمر پرویز نے  سابق صدر  زرداری کی تصاویر بھی 9لاکھ میں بنائی تھیں،  صدر ممنون حسین کو اپنے اہل خانہ کا البم بھی دیا گیا اس کا بل ڈیڑھ لاکھ روپے ادا کرنے کے تقاضا کیا گیا۔ فوٹو گرافر قمر پرویز کا موقف ہے کہ یہ کوئی عام تصاویر نہیں ہوتی، ہم اس پر بہت محنت کرتے ہیں  75فیصد تصویریں ہاتھ سے بنائی جاتی ہیں اس لئے بیش قیمتی ہوتی ہیں۔ پریس سیکرٹری ایوان  صدر نے کہا ہے کہ  صدر کے سرکاری پورٹریٹ  پر بھاری رقم   خرچ نہیں کی گئی۔  ایوان صدر نے پورٹریٹ  کیلئے کوئی ادائیگی  نہیں کی اس حوالے سے  میڈیا کی  خبر بے بنیاد  اور حقائق کے منافی ہے۔