عمران خان اور ریحام خان کی شادی ایک سال بھی نہ چل سکی اورطلاق ہو گئی

30 اکتوبر 2015 (15:11)

پاکستان تحریک انصاف کے ترجمان نعیم الحق نے عمران خان اورریحام خان کے درمیان طلاق ہونے کی تصدیق کر دی ہے۔نعیم الحق کامزید کہنا تھا کہ عمران خان اور ریحام خان نے باہمی رضامندی سے راستے جدا کرنے کا فیصلہ کیا ہے-انہوں نے کہا کہ میڈیا کو چاہیئے کہ عمران خان اور ریحام خان کی ذاتی زندگی کے حوالے سے قیاس آرائیاں کرنے سے گریز کرے- چیئرمین عمران خان اور ریحام خان نے رواں سال آٹھ جنوری کو نکاح کیا تھا جبکہ آج ایک سال مکمل ہونے سےپہلے ہی دونوں کے مابین طلاق کا باضابطہ طور پر اعلان کر دیا گیا ہے-اس حوالے سے ذرائع کا کہنا ہے کہ عمران خان کی طرف سےحق مہرکے8کروڑ روپےجہانگیر ترین نےادا کیے-ذرائع کے مطابق ریحام کو طلاق کے بعد اٹھارہ کروڑ مالیت کے زیوارت اور اثاثے ملیں گے۔ ذرائع کےمطابق عمران خان اور ریحام میں صلح کی تمام کوششیں ناکام ہونے کے بعد دس روز قبل طلاق ہوئی ۔ ذرائع کےمطابق اختلافات کی اصل وجہ عمران خان کا ریحام خان کوتحریک انصاف کی سیاسی سرگرمیوں سے دور رکھنا تھا- عمران خان اور ریحام کی شادی سے ان کی بہنیں خوش نہیں تھی۔ جمعرات کولاہور میں عمران کی اپنی بہنوں سے ملاقات کے بعد طلاق کی خبر میڈیا میں نشر کی گئی۔عمران اور ریحام خان کی طلاق پر تبصرہ کرتے ہوئے عمران کی بہنوں کا کہنا تھا کہ ان کا اس طلاق سے کوئی تعلق نہیں اور نہ عمران خان سے اس موضوع پر بات کی نہ اس قسم کا کوئی مشورہ دیا۔