جھڑپ میں میجر سمیت 4 فوجی ہلاک لشکر طیبہ کے اہم کمانڈر کو شہید کرنے کا بھارتی دعوی

30 اکتوبر 2015

سرینگر (اے این این + رائٹرز + نیٹ نیوز) مقبوضہ کشمیر کے علاقے بانڈی پورہ میں مجاہدین کے ساتھ جھڑپ میں میجر سمیت 4 بھارتی فوجی ہلاک ہو گئے۔ پولیس کا لشکر طیبہ کے اہم کمانڈر کو شہید کرنے کا دعویٰ۔ تفصیلات کے مطابق مقبوضہ کشمیر میں ضلع ہیڈ کوارٹر کے نزدیک ہر مکھ پہاڑی سلسلہ میں مجاہدین اور بھارتی فوج کے درمیان فائرنگ کا تبادلہ ہوا جس میں میجر سمیت 4 بھارتی ہلاک ہو گئے۔ پولیس کا دعویٰ ہے فوج نے ہیلی کاپٹروں کی مدد بھی حاصل کرلی ہے جو بوٹھو جنگل کی فضائی نگرانی کررہے ہیں۔14آر آر اور 7پیرا سے وابستہ کمانڈوز اور پولیس کے سپیشل آپریشن گروپ نے تین روزسے بانڈی پورہ کے ستھرو، کوٹا ستھرو، سملر، ارن، کڈارہ، چونٹی واری ، بوٹھو اور ملحقہ علاقہ جات کے وسیع جنگلات کی تلاشی کارروائی بڑے پیمانے پر جاری رکھی ہوئی ہے۔ علاقے میں سخت خوف و ہراس پھیل گیا ہے اور لوگ گھروں میں محصور ہو کر رہ گئے ہیں۔ فورسز کو اطلاع ملی کہ لشکر طیبہ کا انتہائی مطلوب کمانڈر ابو قاسم اپنے کئی ساتھیوں سمیت انہی جنگلات میں موجود ہے۔ بھارتی پولیس نے جھپ میں لشکر طیبہ کے کمانڈر ابو قاسم کو شہید کرنے کا دعویٰ کیا ہے۔ ریاستی پولیس کے سربراہ جاوید مجتبیٰ گیلانی نے بتایا کہ ابو قاسم کئی حملوں میں ملوث تھا۔ انہوں نے الزام عائد کیا کہ ابو قاسم کا تعلق پاکستان کے علاقے بہاولپور سے تھا یہ اہم کامیابی ہے۔پولیس ڈائریکٹر راجندرا نے کہا قاسم کی گرفتاری پر 20لاکھ انعام مقررتھا، سکیورٹی احکام کا کہنا ہے کہ راشٹریہ رائفل کے 14اہلکارزخمی ہوئے ہیں پلوامہ میں ہڑتال بھارت مخالف نعرے اسلام آبادمیں سابق کٹھ پتلی وزیراعلیٰ عمر عبداللہ شہید ٹرک ڈرائیور زاہد رسول کے لواحقین سے تعزیت کے لئے جارہے تھے راستے میں خواتین نے نعرے لگائے پولیس نے منشتر کرنے کیلئے لاٹھی چارج کیا زائد رسول کی بہن نجمہ سمیت متعدد زخمی ہوگئے۔

EXIT کی تلاش

خدا کو جان دینی ہے۔ جھوٹ لکھنے سے خوف آتا ہے۔ برملا یہ اعتراف کرنے میں لہٰذا ...