بھکھی‘ کاہنہ‘ چناب نگر میں 2 بچیوں سمیت 5 بچوں‘ 2 خواتین سے زیادتی

30 اکتوبر 2015

بھکھی + کاہنہ + فیصل آباد + اوکاڑہ + چناب نگر (نامہ نگار + نمائندہ خصوصی) بھکھی‘ کاہنہ اور چناب نگر میں 2 بچیوں سمیت 5 بچوں‘ 2 خواتین سے زیادتی کی گئی۔ تفصیلات کے مطابق بھکھی اور گردونواح میں 3 بچوں سمیت 2 خواتین سے زبردستی زیادتی۔ تھانہ مانانوالہ کے علاقہ لیاقت آباد کے محنت کش شاہد نے پولیس کو تحریری درخواست دی ہے ملزم شہباز نے اس کے بھتیجے صالح کو ورغلا پھسلا کر قریبی باغ میں لے جا کر زیادتی کر ڈالی۔ خانقاہ ڈوگراں کے محنت کش کریم دین نے مذکورہ تھانہ میں ملزم امجد علی کے خلاف تحریری درخواست دی ہے۔ ملزم نے اس کے 11 سالہ بیٹے عمران سے زیادتی کر ڈالی۔ بھکھی کے علاقہ فیروز وٹواں کے محنت کش محمد عمران کی بیٹی کرن بی بی 8 سالہ سودا سلف لینے کیلئے بازار گئی ہوئی تھی علاقے کے اوباش نوجوان صفدر علی معصوم بچی کو ورغلا پھسلا کر اپنے مکان میں لے گیا جہاں پر اس نے مبینہ طور پر بچی سے زیادتی کر ڈالی۔ اسی تھانہ کے رہائشی محنت کش محمد اشرف سکنہ کھوکھر والی نے مذکورہ تھانہ میں درخواست دی ہے اس کی 20 سالہ بیٹی کومل اپنی خالہ بشریٰ بی بی کے گھر میں گئی ہوئی تھی۔ ملزم حفیظ نے اس سے زبردستی زیادتی کر ڈالی۔ کاہنہ میں اوباش نوجوان کی 10 سالہ بچی کے ساتھ زیادتی۔ کاہنہ کے علاقہ ہارون پارک گجومتہ کے شفیق کی 10 سالہ بیٹی ام سلمیٰ سے محلے دار اوباش نوجوان محسن نے زیادتی کر ڈالی۔ علاوہ ازیں فیصل آباد کے تھانہ سرگودھا روڈ کے علاقہ کے رہائشی قمر علی کا بھائی 14 سالہ حسن محلہ مصطفی آباد میں جلسہ میں شمولیت کیلئے جا رہا تھا راستہ میں موٹرسائیکل سوار دو ملزموں ریحان اور نصیر مسیح اسے زبردستی موٹرسائیکل پر بٹھا کر کریسنٹ سپورٹس کمپلیکس لے گئے اور زبردستی زیادتی کر ڈالی۔ اوکاڑہ کے نواحی قصبہ ٹھٹھہ بھروانہ کے مہر اشفاق کے 11 سالہ بیٹے محمد سجاد کو ملزم ریاست نے زبردستی زیادتی کی۔ چناب نگر میں اوباش نوجوان نے بچے کے ساتھ زیادتی کی۔ موضع ہست کھیوہ کے محمد اعجاز کے بھائی قاسم سے اوباش نوجوان اعجاز نے زیادتی کر ڈالی۔ پولیس نے میڈیکل لیگل کے بعد مقدمہ درج کرکے ملزم کو گرفتار کر لیا۔