آر ایس ایس نے مسلمانوں کی بڑھتی آبادی روکنے کےلئے قرارداد لانے کا فیصلہ کرلیا

30 اکتوبر 2015

نئی دہلی (نیٹ نیوز) بھارتی حکمران جماعت بی جے پی کی ذیلی تنظیم آر ایس ایس نے مسلمانوں کی بڑھتی ہوئی آبادی کو روکنے کے لئے ایک قرارداد لانے کا فیصلہ کر لیا۔ یہ فیصلہ آر ایس ایس کے تین روزہ ایگزیکٹیو کمیٹی کے اجلاس میں کیا گیا۔ قرارداد میں حکومت پر مسلمانوں اور ہندوو¿ں کی آبادی میں تناسب کو برابری کی سطح پر لانے کے لئے اقدامات کرنے پر زور دیا جائے گا۔ میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے آر ایس ایس کے ترجمان منموہن وادیا کا کہنا تھا بھارت میں ہونے والی حالیہ مردم شماری میں زبردست عدم توازن دیکھنے میں آیا ہے۔ مردم شماری کے مطابق بھارت میں گزشتہ 10 برسوں کے دوران مسلمانوں کی آبادی 17 کروڑ سے تجاوز کر چکی ہے۔ ایک اندازے کے مطابق پچھلے دس سال میں مسلمانوں کی آبادی میں زیرو عشاریہ 8 فیصد اضافہ ہوا جبکہ اس کے مقابلے میں ہندوو¿ں کی آبادی میں زیرو عشاریہ 7 فیصد کمی واقع ہوئی ہے۔
آر ایس ایس