انتہا پسندی سے سیکولرازم کے دعویدار بھارت کا چہرہ بے نقاب ہو گیا: سیمینار

30 اکتوبر 2015

لاہور (سٹاف رپورٹر) دنیا کی سب سے بڑی جمہوریت اور سیکولر ازم کے دعوے دار بھارت کا چہرہ بے نقاب ہو گیا۔ دہلی میں بیٹھے عالمی میڈیا کے 200 سے زائد نمائندے دنیا کو بھارت کا انتہا پسندی اور دہشت گردی کا اصلی چہرہ دکھانے میں ناکام ہو گئے۔ اِن خیالات کا اظہار تجزیہ نگاروں نے پنجاب یونیورسٹی کے شعبہ علوم ابلاغیات میں سیمینار ”بھارتی انتہا پسندی کی تازہ لہر اور عالمی میڈیا کا کردار“ سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ تقریب کے مہمانِ خصوصی صوبائی وزیر تعلیم رانا مشہود احمد تھے۔ صدارت وائس چانسلر پنجاب یونیورسٹی ڈاکٹر مجاہد کامران نے کی جبکہ دیگر مقررین میں سلمان غنی اور ڈاکٹر مجاہد منصوری، ڈاکٹر نوشینہ سلیم، سجاد میر، فرخ سہیل گوئندی شامل تھے۔ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے رانا مشہود نے کہا کہ بھارت کی انتہا پسندی کوئی نئی بات نہیں۔ ہمیں اپنی سمت بدلنا ہو گی اور سنجیدہ ہونا پڑے گا کیونکہ علاقے جنگ سے نہیں وژن سے فتح ہوتے ہیں۔