وہ بھی حیرت خانہ¿ اِمروز و فردا ہے کوئی؟

30 اکتوبر 2015

وہ بھی حیرت خانہ¿ اِمروز و فردا ہے کوئی؟

اور پیکارِ عناصر کا تماشا ہے کوئی؟
آدمی واں بھی حصارِ غم میں ہے محصور کیا؟
اس ولایت میں بھی ہے انساں کا دل مجبور کیا؟
(بانگِ درا)