ویسٹ انڈیز سیریز کے ٹکٹ لینے والوں کی قطاریں لگی رہیں

30 مارچ 2018

لاہور (نمائندہ سپورٹس +سپورٹس رپورٹر )کراچی کے مختلف علاقوں میں کوریئر کمپنی کے دفاتر کے باہر رات گئے ویسٹ انڈیز سیریز کے ٹکٹ لینے والوں کی قطاریں لگی رہیں۔قطاروں میں مردوں کےساتھ ساتھ خواتین بھی نظرآئیں۔کئی گھنٹے سے لائن میں لگے ہوئے شہریوں کا کہنا تھا کہ بہت تگ و دو کے بعد ٹکٹ مل رہے ہیں، 500والے ٹکٹ ختم ہوگئے ہیں جس پر مجبوراً انہیں1000 یا 2000 والے ٹکٹ لینے پڑ رہے ہیں۔ کوشش ہے کہ اس بار پوری فیملی کے ہمراہ میچ دیکھ سکیں۔پاکستان کرکٹ بورڈ کو چاہئے کہ وہ شائقین کی آسانی کیلئے سہولیات کا بندو بست کرے تاکہ ٹکٹس آسانی سے دستیاب ہوسکیں۔ لمبی لمبی قطاروں میں انتظار کے باوجود ٹکٹس نہ ملیں تو مایوسی تو ہوتی ہے جس کا ذمہ دار بورڈ ہی ہوتا ہے ۔۔کورئیر کمپنی کی بعض شاخوں پر پہلے ٹی ٹونٹی کے تمام ٹکٹس ختم ہوگئے جبکہ دوسرے اور تیسرے ٹی ٹونٹی میچ کی ٹکٹس دستیاب ہیں۔

ٹکٹ کی فروخت میں سست رفتاری سے شائقین پریشانی کا شکار رہے اور انہوں نے شکوہ کیا کہ طویل قطاریں ہیں اور ٹکٹ دینے میں کوریئر کمپنی کے عملے کی جانب سے بہت وقت لیا جارہا ہے۔شائقین نے مطالبہ کیا کہ ٹکٹس کی فروخت کا نظام درست کیا جائے۔