شاہد خاقان نے چیف جسٹس کے سامنے ہاتھ جوڑے ، عمران : سنجرانی کیخلاف بیان واپس نہ لیا تو اسلام آباد تک مارچ ہوگا، قدوس بزنجو

30 مارچ 2018

کوئٹہ (بیورو رپورٹ+ نوائے وقت رپورٹ+ ایجنسیاں) عمران خان نے کہا ہے کہ جمہوریت تب آتی ہے جب الیکشن صاف و شفاف ہوں۔ میرا دل کہتا ہے آئندہ پی ٹی آئی کی حکومت ہوگی، جس پارٹی کا سربراہ کرپٹ ہے ان سے الائنس نہیں ہوگا۔ الیکشن 2018ء ہماری تاریخ کے فیصلہ کن انتخابات ہوں گے۔ ہم الیکشن کی تیاری کررہے ہیں۔ ہم نے سینٹ میں نہ نوازشریف کا چیئرمین آنے دیا نہ پیپلزپارٹی کا ہم وزیراعلیٰ بلوچستان کو نئی سیاسی جماعت بنانے میں مبارکباد دیتے ہیں۔ ہم ہر اس پارٹی کے ساتھ کھڑے ہیں جو کرپشن کے خلاف ہے۔ اٹھارہویں ترمیم سے اختیارات نیچے منتقل ہوئے ہیں۔ باجوہ ڈاکٹرائن کو میں یہی سمجھتا ہوں وہ پاکستانی آئین‘ قانون کے ساتھ کھڑے ہیں۔ زرداری صاحب اتنے ہی کرپٹ ہیں جتنے نوازشریف‘ چوری کے پیسے بچوں کو باہر بھیجیں‘ کوئی پکڑے تو کہو جمہوریت خطرے میں ہے یہ ہے شریف ڈاکٹرائن۔ میں شاہد خاقان عباسی سے پہلے ہی مایوس تھا۔ جب آپ ہار گئے تو شروع ہوگئے کہ سینٹ الیکشن میں دھاندلی ہوئی۔ وزیراعظم کا ون پوائنٹ ایجنڈا نوازشریف کو بچانا ہے۔ یقین ہے شاہد خاقان عباسی نے چیف جسٹس کے سامنے ہاتھ جوڑے ہوں گے نوازشریف کو چھوڑ دیں۔ ’’نوازشریف کو بچالو‘ این آر او دلائو، کسی طرح سے چھڑا دو، چیف جسٹس سے فریاد کی ہو گی‘‘۔ شبہ ہے کہ دورہ امریکہ میں بھی شاہد خاقان نے ہاتھ پائوں جوڑے ہوں گے‘ نوازشریف کو بچایا جائے۔ وزیراعظم کی ڈوریاں نوازشریف ہلا رہے ہیں۔ خیبر پی کے میں ہماری کارکردگی کی وجہ سے باقی صوبوں پر دبائو بڑھا۔ شریف ڈاکٹرائن یہ ہے کہ دھاندلی کرکے اقتدار میں آئو اقتدار میں آکر بڑے پراجیکٹس بنائو‘ پیسے چوری کرو‘ یہ ہے شریف ڈاکٹرائن۔ یہ کبھی نہیں ہوا کہ ملک کا وزیراعظم اپنی سپریم کورٹ اور اس کے فیصلے پر تنقید کریں۔ اگر وزیراعظم سپریم کورٹ کا فیصلہ نہیں مان رہا تو وہ لوگ کیوں مانیں جو جیلوں میں ہیں۔ وزیراعلیٰ بلوچستان کے ساتھ مشترکہ پریس کانفرنس میں انہوں نے کہا کہ جب بھی بلوچستان آتا ہوں یہاں کے لوگوں میں مایوسی ہی مایوسی دیکھتا ہوں۔ شاہد خاقان عباسی سپریم کورٹ اور ججز کی توہین کر رہے ہیں کبھی ملک کا وزیراعظم سپریم کورٹ پر تنقید نہیں کرتا مگر شاہد خاقان عباسی مسلسل کیے جا رہا ہے۔ مریم نواز کے پاس اربوں روپے کہاں سے آئے۔شاہد خاقان عباسی کو لانے کا مقصد ہی یہ ہے کہ کسی نہ کسی طریقے سے نواز شریف کا اربوں روپیہ بچ جائے جو اس نے چوری کر کے باہر رکھا ہوا ہے۔ جب ساری جماعتوں نے 2013کے الیکشن میں دھاندلی پر آواز اٹھائی تب شاہد خاقان عباسی کہا ں تھے جب آپ ہار گئے تو شروع ہو گئے کہ سینیٹ الیکشن میں دھاندلی ہوئی۔ میری کوشش ہو گی کہ اب ایسا نگران سیٹ اپ آئے جس پر تمام جماعتیں متفق ہوں خیبر پی کے میں ہماری کارکردگی کی وجہ سے باقی صوبوں پر دبائو بڑھا جمہوریت صاف شفاف انتخاب سے آتی ہے 1970کے سوا کوئی صاف شفاف انتخاب نہیں ہوئے۔ وزیراعلٰی بلوچستان عبدالقدوس بزنجو نے کہا ہے کہ وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی سے بڑی امیدیں وابستہ تھیں مگر انہوں نے بلوچستان کے منتخب چیئرمین سینیٹ کے خلاف بیان دے کر پورے ملک اور صوبے کے عوام کو صدمے سے دو چار کیا ہے سوچ بھی نہیں سکتے تھے وزیر اعظم ایسی غیر ذمہ دارانہ بات کر سکتے ہیں وزیر اعظم اپنا بیان واپس لیں ورنہ اسلام آباد کی طرف مارچ کریں گے انہوں نے کہا کہ چیئرمین سینیٹ کا عہدہ انتہائی معزز عہدہ ہے اس کے خلاف بیان بازی کرنا مناسب نہیں وزیر اعظم کے بیان سے بلوچستان کے عوام کو بہت تکلیف پہنچی ۔پیپلز پارٹی فاٹا اور ایم کیو ایم کے دوستوں نے بڑا دل کیا اور چیئرمین اور ڈپٹی چیئرمین سینیٹ کے لیے ہماری حمایت کی عمران خان کی حمایت کے بیحد شکر گزار ہیں جنہوں نے پورے بلوچستان کے عوام کو خوشی دی ہے۔علاوہ ازیں کوئٹہ میں عمران نے سردار محمد رند سے ملاقات کی۔ پی ٹی آئی کی رکنیت سازی مہم اور دیگر امور پر بات کی گئی۔ادھر لاہور میں عمران کے دورے کی تمام تیاریاں مکمل کرلی گئی ہیں۔ عمران خان 5 اور 6 اپریل کو سندھ کا دورہ کریں گے۔ عمران خان 5اپریل کو نواب شاہ، سانگھڑ اور کھپرو جائیں گے، جبکہ اسی دن میر پور خاص اور ٹنڈو الہ یار کا دورہ کریں گے، رات وہ حیدر آباد میں ہی قیام کریں گے۔6اپریل کو عمران خان ناشتے پر حیدر آباد کی کاروباری شخصیات سے ملیں گے، وہیں آباد کاروں کی تنظیم سے خطاب کریں گے۔ عمران خان نے بلوچستان میں شوکت خانم ہسپتال بنانے کا اعلان کر دیا ہے ترجمان پی ٹی آئی نے کہا ہے کہ شوکت خانم کینسر ہسپتال بلوچستان حکومت کے اشتراک سے بنایا جائے گا۔