اسرائیلی ایئر لائن نے ایئر انڈیا کے خلاف سپریم کورٹ میں اپیل دائر کردی

30 مارچ 2018

مقبوضہ بیت المقدس(این این آئی)اسرائیلی ہوائی کمپنی نے ملک کی عدالت عالیہ میں اپیل دائر کی ہے کہ نئی دہلی اور تل ابیب کے درمیان براہ راست پروازوں کے لیے سعودی فضائی حدود استعمال کرنے کے اجازت نامے کو منسوخ کیا جائے۔غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق ایئر انڈیا نے نئی دہلی اور تل ابیب کے درمیان یہ ہوائی روٹ رواں ماہ کی بائیس تاریخ کو شروع کیا تھا۔ اس نئے روٹ سے دوران پرواز دو گھنٹے تک کم ہو گئی ہے۔ اس سے قبل سعودی عرب نے اسرائیل کو جانے والی پروازوں کے لیے اپنی فضائی حدود استعمال کرنے پر پابندی لگا رکھی تھی۔ اسرائیل اور سعودی عرب میں سفارتی تعلقات قائم نہیں ہیں اور اس کی بنیادی وجہ یہ ہے کہ سعودی عرب نے ابھی تک اسرائیل کو بطور ایک ریاست کے تسلیم نہیں کیا۔اسرائیلی فضائی کمپنی ایل آل کا کہنا تھاکہ سعودی عرب نے اب تک اس کی پروازوں کو اپنی فضائی حدود استعمال کرنے کی اجازت نہیں دی اور یہ کہ ایل آل ایک غیر منصفانہ مقابلے کا شکار ہو رہی ہے۔ایل آل کے سربراہ گونن اوسشکن کا کہنا تھا کہ ریاستِ اسرائیل حکومتی فیصلے سے پہنچنے والے نقصان کو سمجھ نہیں رہی ہے۔ آج بات بھارت کی ہے، کل تھائی لینڈ کی ہو گی اور پھر سارا مشرق۔