اسلام آباد ہائیکورٹ نے فاروق ستار کو متحدہ پاکستان کی کنوینر شپ پر بحال کر دیا

30 مارچ 2018

اسلام آباد ( وقائع نگار) اسلام آباد ہائی کورٹ نے ایم کیو ایم کی کنوینئر شپ کے حوالے سے الیکشن کمیشن آف پاکستان کا فیصلہ معطل کرتے ہوئے فریقین سے 11اپریل تک جواب طلب کرلیا ہے جمعرات کو ڈاکٹر فاروق ستار کی درخواست پر عدالت عالیہ کے جسٹس عامر فاروق نے سماعت کی درخواست گزارفاروق ستار کی طرف سے بابرستار ایڈووکیٹ نے دلائل دیتے ہوئے موقف اختیار کیا کہ قانون کے مطابق الیکشن کمیشن کو پارٹی کے اندرونی معاملات میں مداخلت کا اختیار نہیں الیکشن کمیشن میں انٹرا پارٹی الیکشن میں منتخب عہدیداروں کی فہرست جمع کرانا ہوتی ہے الیکشن کمیشن میں ایم کیو ایم پاکستان فاروق ستار کے نام سے رجسٹرڈ پارٹی ہے۔ کوئی دوسرا بندہ پارٹی کی سربراہی کا دعویٰ کرے تو الیکشن کمیشن کو اس پر سماعت کا اختیار نہیںبابر ستار ایڈووکیٹ نے مزید کہا کہ ایسی صورت میں سربراہی کا دعوی کرنیوالا شخص سول عدالت سے رجوع کرسکتا ہے میر ے موکل نے الیکشن کمیشن میں سماعت کے دوران بھی اختیار کا معاملہ اٹھایا تھا تاہم خلاف ضابطہ ان کے خلاف فیصلہ دے دیا گیا لہٰذا عدالت ای سی پی کے فیصلے کو کالعدم قرار دے کونسل نے اپنے دلائل میں کہا کہ الیکشن کمیشن کہے تو دوبارہ انٹرا پارٹی الیکشن کرانے کو تیار ہیں عدالت نے دلائل سننے کے بعد فریقین کو گیارہ اپریل کے لیے نوٹس جاری کردئیے ہیں۔