فاروق ستار بہادر آباد پہنچ گئے‘چائے بسکٹ سے تواضع

30 مارچ 2018

کراچی( راشد نور) ایم کیو ایم کے سربراہ ڈاکٹر فاروق ستار بہادر آباد پہنچ گئے اور کہا کہ اسلام آباد ہائی کورٹ نے حکم امتناع جاری کرکے مجھے سہولت دی ہے اب میرے پاس کوئی رکاوٹ یا بہانہ نہیںرہا۔ بہادر آباد کے ساتھیوں نے مجھ سے کوئی شکوہ نہیں کیا جو مختلف اخلاقی نقطہ نظر کے ساتھ ایک دوسرے کے ساتھ نظر آرہے ہیں ایم کیو ایم پاکستان میری بھی ہے اور ڈاکٹر خالد مقبول کی بھی ہے۔ مجھے یہا ں اپنائیت ملی ہے بلا تکلف گفتگو ہوئی مجھے چائے پلاکر ہی نہیں بسکٹ چپس کے ساتھ تواضع کی گئی ملاقات اس ارادے کی غماز ہے کہ اختلافات بھلے کتنے ہی ہوں باہمی عزت و احترام رہنا چاہئے۔45 دن کی دوری 35 سال کی رفاقت پر حاوی نہیں ہوگی اونٹ کس کروٹ بیٹھتا ہے آج یہاں پر ہم نے اختلافی نقاط پر بات نہیں کی۔ سرسری بات کی ہے او راپنے مرکز میں بیٹھ کر انجوائے کیا ہے اب کوئی ابہام نہیں ہے میں سربراہ بھی ہوں کارکن بھی ہوں بات چیت کے سلسلے کو جاری رکھیں گے کل یا پرسوں پھر بیٹھیں گے۔ خالد مقبول نے کہا کہ ہم ان کو بلاتے رہے فاروق بھائی کو آئینی ادارے نے پوزیشن دی ہے ہمارے پاس دو محبتیں ہیں اس کے لئے کسی آئینی جواز کی ضرورت نہیں ہے اسلام آباد ہائی کورٹ کا عبوری فیصلہ آیا ہے وقت گزر گیا تمام گنجائشیں موجود ہیں متحدہ نے اخلاقیت کو قائم رکھا ہے جتنے بھی ساتھی آئیں گے فاروق بھائی اور ساتھیوں کے ساتھ کھڑا ہوں بات چیت آگے بڑھائیں گے۔ آپ کا آنا اچھا لگا آتے رہنا اچھا لگے گا۔
فاروق ستار