ایسٹر پر 2 اپریل کو مسیحی عوام کیلئے چڑیا گھر میں داخلہ مفت

30 مارچ 2018

کراچی ( اسٹاف رپورٹر) میئر کراچی وسیم اختر نے کہا ہے کہ بلدیہ عظمیٰ کراچی سے مسیحی برادری سے تعلق رکھنے والے ملازمین کو ان کے واجبات کے چیک ادا کرنے کا مقصد ان کی ایسٹر کی خوشیوں کو دوبالا کرنا ہے تاکہ وہ اپنے خاندان  کے ہمراہ بہتر طریقے سے اپنا تہوار منا سکیں، 2 اپریل کو ایسٹر کی خوشی میں کراچی چڑیا گھر میں مسیحی برادری کے لئے داخلہ مفت ہوگا جبکہ مختلف اسکولوں اور چرچز کے ایک ہزار بچوں کو کے ایم سی کی جانب سے مفت سیر کرائی جائے گی، یہ بات انہوں نے بلدیہ عظمیٰ کراچی کے مرکزی دفتر میں منعقدہ واجبات کے چیکس کی تقسیم کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہی، اس موقع پر سٹی کونسل پارلیمانی لیڈر اسلم شاہ آفریدی، اراضیات کمیٹی کے چیئرمین سید ارشد حسن، فنانس کمیٹی کے چیئرمین ندیم ہدایت ہاشمی، میڈیا کے مینجمنٹ کمیٹی کی چیئرپرسن صبحین غوری، قانون امور کمیٹی کے چیئرمین عارف خان ایڈوکیٹ، ای اینڈ آئی پی کے چیئرمین قیصر امتیاز ، سینئر ڈائریکٹر ویلفیئر عبدالجبار بھٹی اور مسیحی برادری سے تعلق رکھنے والے سٹی کونسلرز بھی موجود تھے، میئر کراچی نے کہا کہ ایسٹر کے موقع پر مختلف فیملیوں کو ان کے واجبات کے مد میں آج 50 لاکھ 80 ہزار کے چیکس تقسیم کئے جا رہے ہیں ہماری کوشش تو یہ تھی کہ تمام پنشنرز کو آج ان کے واجبات ادا کردیئے جائیں لیکن فنڈز نہ ہونے کی وجہ سے ایسا کرنا ممکن نہیں تھا، اس لئے مسیحی برادری کے افراد کو ترجیحا چیک دیئے گئے ہیں، انہوں نے کہا کہ واجبات کی مد میں ساڑھے 17 سو ملازمین کو ایک ارب 16 کروڑ روپے ادا کرنے ہیں جس کے لئے ملازمین روزانہ کے ایم سی کے دفتر آتے ہیں اور فنڈ ز نہ ہونے کے سبب مایوس لوٹ جاتے ہیں۔