توانائی بحران نے معیشت کو جکڑ رکھا ہے‘ قوم کو لوڈشیڈنگ کے عذاب سے نجات دلائیں گے : شہبازشریف

30 جون 2013
توانائی بحران نے معیشت کو جکڑ رکھا ہے‘ قوم کو لوڈشیڈنگ کے عذاب سے نجات دلائیں گے : شہبازشریف

لاہور (خصوصی رپورٹر) وزیر اعلیٰ شہباز شریف نے کہا ہے کہ توانائی بحران نے ملک و قوم اور قومی معیشت کو بری طرح جکڑ رکھا ہے۔ تعلیم، صحت، زراعت، لائیو سٹاک، صنعت و تجارت اور زندگی کے تمام شعبے توانائی کے بحران سے متاثر ہیں۔ توانائی بحران میں کمی کے حوالے سے عوام کو جوابدہ ہیں اسی لئے لوڈشیڈنگ میں کمی لانے کیلئے جنگی بنیادوں پر اقدامات کئے جا رہے ہیں۔ کم سے کم وقت میں توانائی کے حصول کے منصوبے شروع کرکے انہیں پایہ تکمیل تک پہنچانا ہے۔ وزیراعلیٰ نے ہدایت کی کہ ون ونڈو انرجی پالیسی کو جلد سے جلد حتمی شکل دی جائے اور اس ضمن میں تمام سٹیک ہولڈرز سے نتیجہ خیز مشاورت کا عمل فوری مکمل کیا جائے۔ پبلک پرائیویٹ پارٹنر شپ کے تحت توانائی کے منصوبے شروع کرنے کا جائزہ لیا جائے۔ وہ کابینہ کمیٹی برائے توانائی کے اجلاس کی صدارت کر رہے تھے۔ شہباز شریف نے کہا سابق وفاقی حکمرانوں نے پانچ برس کے دوران توانائی کے بحران کے خاتمے پر توجہ نہ دے کر ملک و قوم کے ساتھ سنگین جرم کیا ہے۔ ان کی لوٹ مار اور کرپشن کی پالیسیوں کی بدولت ملک و قوم آج اندھیروں میں ڈوبے ہیں۔ مسلم لیگ (ن) کی حکومت کو عوام نے توانائی کے بحران کے خاتمے کا مینڈیٹ دیا ہے اور ہم انشاءاللہ اجتماعی بصیرت اور انتھک محنت سے قوم کو لوڈشیڈنگ کے عذاب سے نجات دلا کر دم لیں گے۔ کوئلے، ونڈ، ہائیڈرو ، بائیوگیس اور بائیوماس سمیت دیگر متبادل ذرائع سے توانائی کے حصول کے منصوبوں پر کام کر رہے ہیں۔ وزیر اعلیٰ نے ہدایت کی کہ کوئلے کی کانوں کے لائسنس حاصل کرکے کام نہ کرنے والوں کے خلاف کارروائی عمل میں لائی جائے اور ایسی کانوں کے لائسنس منسوخ کئے جائیں۔ وزیر اعلیٰ نے امتحانات میں نمایاں پوزیشن حاصل کرنے والے پاکستان بھر سے ہونہار طلبا و طالبات کے 40 رکنی وفد کو یورپی ممالک کی معروف یونیورسٹیوں کے مطالعاتی دورے پر رخصت کیا۔ تقریب سے خطاب میں انہوں نے کہا کہ طلبا و طالبات کی حوصلہ افزائی کا یہ سلسلہ مزید آگے بڑھائیں گے۔ دنیا کی معروف یونیورسٹیوں کے دورے کیلئے طلبا و طالبات کا میرٹ کی بنیاد پر انتخاب کیا گیا ہے، یہ طلبا پاکستان کے سفیر ہیں، انہیں اپنے کردار، عمل اور محنت کی بدولت پاکستان کے امیج کو بہتر بنانا ہے۔ تعلیم کے میدان میں حکومت کی انتھک کاوشوں سے پنجاب دنیا کے نقشے پر تعلیم کے لحاظ سے اہم مرکز بنے گا۔ شہباز شریف سے لاہور میں امریکن قونصل جنرل نینا ماریہ فائٹ نے ملاقات کی۔ ملاقات میں پاکستان کو درپیش توانائی کے بحران،اس پر قابو پانے اور توانائی کے شعبہ میں تعاون کے حوالے سے بات چیت ہوئی۔ شہباز شریف نے کہا کہ توانائی بحران کے باعث معاشی و کاروباری سرگرمیاں متاثر ہوئی ہیں۔ عالمی برادری کا توانائی بحران کے حل کیلئے تعاون چاہتے ہیں۔ علاوہ ازیں وزیر اعلیٰ نے وفاقی ملازمتوں میں صوبائی کوٹہ 10 سال سے بڑھا کر 20 سال کرنے کی منظوری دے دی ہے۔ وفاق نے کوٹہ 10 سال تک بڑھانے کی تجویز دی تھی۔ وزیر اعلیٰ نے جناح ہسپتال میں بجلی کی بندش کے باعث ایمرجنسی وارڈ میں موبائل فون کی ٹارچ کی روشنی میں آپریشن کے حوالے سے خبر، مریدکے میں گھر میں گھس کر خواتین اور مردوں پر تشدد اور فائرنگ کے واقعہ کا نوٹس لے لیا ہے۔