ثاقب باکسر کو رینجرز نے گاڑی سے اتار کر مارا،چیف جسٹس نوٹس لیں:عبدالقادر پٹیل

30 جون 2013

کراچی(نوائے وقت رپورٹ) پیپلزپارٹی کراچی ڈویژن کے صدر عبدالقادر پٹیل نے الزام عائد کیا ہے رینجرز کی جانب سے باکسر اور فٹ بالر ثاقب باکسر کو ہلاک کیا گیا،چیف جسٹس پاکستان ثاقب باکسر کی ہلاکت کا نوٹس لیں۔یہاں پریس کانفرس کرتے ہوئے انہوں نے کہا ثاقب باکسر کو رینجرز نے اپنی گاڑی سے اتار کر فائرنگ کرکے ہلاک کیا،ثاقب باکسر کو لیاری میں ہی قتل کیا گیا،جب ثاقب پٹیل کی نعش ملی،اس وقت اس کی آنکھوں پر پٹی باندھی ہوئی تھی۔انہوںنے کہا ڈی جی رینجرز کی وزیراعلیٰ سندھ سے کو آر ڈینیشن نہ ہونے کے برابر ہے،وزیراعلیٰ سندھ رینجرز کے سامنے بے بس ہیں۔انہوں نے کہا جرائم پیشہ افراد کی حمایت نہیں کرتے۔انہوں نے سوال کیا ہم لیاری گینگ وار کے سرغنہ ہیں تو بتایاجائے کراچی گینگ وار کا سرغنہ کون ہے؟واضح رہے رینجرز حکام کی جانب سے بتایا گیا تھا لیاری کے علاقے نیا آباد میں ملزمان کی جانب سے رینجرز پر فائرنگ کی گئی جس کے بعد لیاری کا آپریشن کیا گیا،فائرنگ کے تبادلے میں لیاری گینگ وار کا مطلوب ملزم ثاقب باکسر ہلاک ہوگیا۔رینجرز حکام کے مطابق ثاقب باکسر مبینہ طورپر فائرنگ میں ملوث تھا۔