وزیر داخلہ نے ڈاکٹر عافیہ کی واپسی کیلئے کمیٹی تشکیل دیدی

30 جون 2013
وزیر داخلہ نے ڈاکٹر عافیہ کی واپسی کیلئے کمیٹی تشکیل دیدی

اسلام آباد (نوائے وقت رپورٹ+ اے پی پی) وزیر داخلہ چوہدری نثار علی خان نے ڈاکٹر عافیہ صدیقی کے معاملہ پر ایک کمیٹی تشکیل دی ہے جو ان کی پاکستان واپسی میں مدد دینے کیلئے کابینہ کو اپنی سفارشات پیش کریگی۔ وزیر داخلہ نے مزید ہدایت کی لاپتہ افراد کے بارے میں وزارت داخلہ کی ٹاسک فورس آئندہ ہفتہ تک تشکیل دی جانی چاہئے تاکہ اس حوالہ سے عدالت عظمی کے احکامات کی روشنی میں ایک شفاف پالیسی کیلئے تیاری کی جا سکے اور سکیورٹی اداروں اور متاثرہ خاندانوں کے ساتھ مشاورت کے بعد لاپتہ افراد کی اصل تعداد کے متعلق ایک شفاف لسٹ تیار کی جائے۔ وزیر داخلہ نے ہدایت کی رحم کی اپیلوں پر پھر سے غور شروع کیا جائے اور تمام اپیلیں فیصلہ کیلئے ایوان صدر بھجوائی جائیں۔ انہوں نے ہدایت کی وزارت اور اس کے ذیلی محکموں کے افسران اس بات کو یقینی بنائیں ان کی رہائش گاہوں پرکام کرنیوالا تمام غیر مجاز عملہ ان کی تعیناتی کے اصل مقام پر واپس بھیجا جائے۔ وزیر داخلہ نے اسلام آباد میں 1122 کی طرز پر ریسکیو سروس قائم کرنے کیلئے ایک منصوبہ تیار کرنے کی بھی ہدایت کی۔ مزید براں وزیر داخلہ نے کہا ہے وفاقی حکومت گلگت بلتستان میں ترقی، بہتر اسلوب حکمرانی اور امن کو یقینی بنانا چاہتی ہے۔ یہاں گلگت بلتستان کے نئے چیف سیکرٹری یونس ڈھاگا سے بات چیت کرتے ہوئے انہوں نے چیف سیکرٹری سے کہا حال ہی میں ہلاک کئے جانے والے 11 سیاحوں کے واقعہ کی تیز رفتاری سے تحقیقات کی جائیں۔ وزیر داخلہ سے برطانوی ہائی کمشنر ایڈم تھامسن نے ملاقات کی۔ اس دوران دو طرفہ عوامی دلچسپی کے امور اور برطانوی وزیراعظم کے دورہ پاکستان کے حوالے سے تبادلہ خیال کیا گیا۔ برطانوی ہائی کمشنر نے وزیراعظم ڈیوڈ کیمرون کے دورے کے حوالے سے انتظامات کرنے پر وزارت داخلہ کا شکریہ ادا کیا۔ وزیر داخلہ نے ہائی کمشنر کو یقین دلایا حکومت پاکستان غیرقانونی امیگریشن، منشیات کی سمگلنگ، منی لانڈرنگ اور دہشت گردی کے خاتمے کیلئے برطانیہ سے مکمل تعاون کریگی۔