آئی سی سی نے محمد عامر کو ڈومیسٹک کرکٹ کھیلنے کی اجازت دیدی

30 جنوری 2015

 لاہور (سپورٹس رپورٹر/ نمائندہ سپورٹس) آئی سی سی نے سپاٹ فکسنگ کے الزام میں 5سال سے پابندی کا شکار محمد عامر کو ڈومیسٹک کرکٹ کھیلنے کی اجازت دے دی۔ آئی سی سی نے محمد عامر پر 2010ءمیں پانچ سال کیلئے پابندی لگائی تھی جو رواں برس 2 ستمبر کو ختم ہونی ہے۔ اس پابندی کے تحت وہ کرکٹ کے حوالے سے کسی نوعیت کی سرگرمی میں حصہ نہیں لے سکتے تھے۔ عامر پر عائد پابندی میں نرمی کا فیصلہ گزشتہ روز دبئی میں ہونیوالے آئی سی سی کے پانچ روزہ اجلاس میں کیا گیا۔ آئی سی سی کی تنظیم کے اینٹی کرپشن یونٹ کے سربراہ سر رونی فلینیگن نے آئی سی سی اور پاکستان کرکٹ بورڈ کی منظوری کے بعد اپنے اختیارات استعمال کرتے ہوئے محمد عامر کو اجازت دے دی ہے کہ وہ فوری طور پر پاکستان کرکٹ بورڈ کے زیرِانتظام منعقد ہونے والے کرکٹ کے مقابلوں میں حصہ لے سکتے ہیں۔ پاکستان کرکٹ بورڈ نے گزشتہ برس آئی سی سی سے مطالبہ کیا تھا کہ وہ عامر پر پابندی کی شرائط میں نرمی کرے کیونکہ انہوں نے میچ فکسنگ کے الزامات کو تسلیم کرتے ہوئے اپنی بحالی کی مدت پوری کر لی ہے۔ محمد عامر پر الزام تھا کہ انہوں نے 2010ءمیں محمد آصف اور سلمان بٹ کے ساتھ مل کر انگلینڈ کے خلاف سیریز میں جان بوجھ کر نوبال کرنے کا منصوبہ بنایا تھا۔ ان الزامات کے بعد آئی سی سی نے محمد آصف اور سلمان بٹ پر دس دس سال کی جبکہ محمد عامر پر پانچ سال کی پابندی لگائی گئی تھی۔ محمد عامر پابندی سے قبل نیشنل بینک کی ٹیم میں شامل تھے لیکن سپاٹ فکسنگ سکینڈل کے سبب ان کا معاہدہ ختم کر دیا گیا تھا۔ مزید برآں این این آئی کے مطابق چیئرمین پی سی بی شہریار خان نے اجلاس میں بتایا کہ محمد عامر کی ڈومیسٹک کرکٹ میں کارکردگی کو مانیٹر کیا جائے گا اور اس کے بعد ان کو انٹرنیشنل کرکٹ کھیلنے کی اجازت دینے پر غور کیا جائے گا۔ دریں اثناءاین این آئی کے مطابق آئی سی سی کی جانب سے سزا میں نرمی کے فیصلے کے بعد محمد عامر نے کہا ہے کہ ڈومیسٹک کرکٹ کھیلنے کی اجازت ملنے پر سب سے پہلے اللہ کا شکرگزار ہوں، نجم سیٹھی‘ شہریار خان سمیت ان تمام لوگوں کا شکر گزار ہوں جنہوں نے کرکٹ کے میدانوں میں واپسی کے لئے میرا ساتھ دیا۔ گزشتہ روز گفتگو کرتے ہوئے محمد عامر نے کہا کہ یہ دن میرے لئے بڑی خوشی کا دن ہے۔ اس خوشی کو لفظوں میں بیان نہیں کر سکتا۔ اب میرا پورا فوکس فٹنس پر ہوگا اور بہت پرامید ہوں کہ ڈومیسٹک اور گریڈ اے کرکٹ میں اپنی پرفارمنس کے ذریعے قومی ٹیم میں جگہ بنا لوں گا، کوشش ہو گی کہ انٹرنیشنل کرکٹ میں ایک بار پھر اپنی پرانی پرفارمنس دکھاﺅں۔اپنی رہائشگاہ پر پریس کانفرنس کرتے ہوئے محمد عامر کا کہنا تھا کہ ڈومیسٹک کرکٹ میں شاندار کارکردگی سے اپنے ناقدین کے منہ بند کر دونگا۔ مجھے اپنے ردھم میں آنے کیلئے ایک ماہ کی ٹریننگ کی ضرورت ہے۔ کرکٹ میں اب میری واپسی نئے لائف سٹائل کے ساتھ ہو گی۔ باﺅلنگ کے ساتھ ساتھ بیٹنگ میں بھی اچھی کارکردگی دکھانے کیلئے پرعزم ہوں۔مزید برآں آئی سی سی کی جانب سے پابندی اٹھنے کے بعد محمد عامر نے جلد شادی کرنے کی خوشخبری سنا دی اور کہا ہے کہ اب لوگوں کو ایک بدلا ہوا عامر ملے گا۔
 

آئی سی سی/ اجازت