کشمیر میںبھارتی مظالم کی نئی لہر ٹرمپ کی شہ کا نتیجہ ہے ،آغا حامد موسوی

29 مئی 2017

اسلام آباد(نیوز ڈیسک) سپریم شیعہ علماءبورڈ کے سرپرست اعلیٰ و تحریک نفاذ فقہ جعفریہ کے سربراہ آغا سید حامد علی شاہ موسوی نے کہا ہے کہ کشمیریوں پر بھارتی مظالم کی نئی لہر ٹرمپ کی شہ کا نتیجہ ہے امریکی عرب اسلامی اتحاد نے مسلمانوں اور عربوں میں نئی خلیج پیدا کردی ہے ،بھارت نے پاکستان کو دولخت کرنے کےءباوجود وطن عزیز کا پیچھا نہیں چھوڑا 74میں بھارتی ایٹمی دھماکے کے بعد جنم لینے والے عزم کا نتیجہ 28مئی1998ء ’یوم تکبیر‘ کو سامنے آیا پاکستان نے بھارت کے ایٹمی دھماکوں کےجواب میں چھ دھماکے کر کے پوری دنیا پرنہ صرف اپنی طاقت کی دھاک بٹھادی بلکہ عالم ا سلام کا سر فخر سے بلند کردیا ،وطن عزیز کو معیشت خارجہ پالیسی گورننس میں بھی جوہری دھماکوں کی اشد ضرورت ہے ،مسلمانوں کے مجمع میں ٹرمپ کی جانب سے بھارت کو دہشت گردی کا شکار ملک کہنا کشمیریوں کو کچلنے کا لائسنس دینے کے مترادف ہے ، عرب اسلامی امریکہ اتحاد کانفرنس نے اپنا وزن مکمل بھارت کے پلڑے میں ڈال دیا جس نے کشمیر کاز کو شدید نقصان پہنچایا ہے اورپاکستان کے حکمرانوں کے بلند وبانگ دعووں اور خارجہ پالیسی کی قلعی کھول کر رکھ دی ہے،مسلمانوں کے وسائل کے ذریعے خریدا جانے والا 380ارب ڈالر میں خریدا جانے والا اسلحہ کشمیریوں فلسطینیوں کی آزادی یا بھارت اسرائیل کے بجائے مسلمانوں کے خلاف استعمال ہو نے کا اعلان قرب قیامت کی نشانی ہے،مسلم ممالک کی بقا امریکی پناہ میں نہیں وحدت و اخوت میں ہے ۔ان خیا لات کا اظہار انہوں نے مختار سٹوڈنٹس آرگنائزیشن پشاور کے عہدیداران سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔