گدھے بڑھ گئے‘ مسلم لیگ نون کو مبارکباد : چیئرمین کشمیر کمیٹی فضل الرحمن کا احتساب کیا جائے : عمران

29 مئی 2017

اسلام آباد (اپنے سٹاف رپورٹر سے+ نوائے وقت رپورٹ) پاکستان تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان نے کہا ہے کہ مقبوضہ کشمیر میں برہان وانی کے بعد بھارتی افواج کے ہاتھوں سبزار بھٹ کی شہادت انتہائی قابل مذمت واقعہ ہے۔ غاصب افواج کی جانب سے سری نگر میں مظاہرین پر پیلٹ گنز چلائی گئیں، ظالم افواج کی جانب سے میڈیا کی آواز کو خاموش کروایا گیا۔ بنی گالہ سے جاری بیان میں چیئرمین پی ٹی آئی نے کہا کہ کشمیری عوام پر ظلم و ستم کی نئی لہر ریاستی دہشت گردی سے کسی طور کم نہیں عالمی برادری کشمیری عوام کے خلاف بھارتی جبر و استبداد کا نوٹس لے مقبوضہ کشمیر دنیا میں وہ جگہ ہے جہاں انتہائی کثیر تعداد میں فوج تعینات ہے۔ عمران نے کہا کہ بدقسمتی سے عالمی سیاست میں بھارت کو کشمیریوں پر بیجا ستم اٹھانے کی اجازت ہے۔ بھارت کی جانب سے میڈیا ، انٹر نیٹ اور سماجی میڈیا کی بندش اسکی آمرانہ اور جابرانہ روش کی عکاس ہے قوت کے استعمال سے کشمیریوں کو ان کے حق خود ارادیت سے محروم نہیں کیا جاسکتا انصاف اور حق خود ارادیت کی تحریک میں ہم اپنے کشمیری بھائیوں کے شانہ بشانہ رہیں گے چیئرمین تحریک انصاف نے کہا کہ کشمیریوں کی مرضی اور منشاء کے بغیر مسئلے کا کوئی حل ممکن نہیں۔ مولانا فضل الرحمٰن کی سربراہی میں کشمیر کمیٹی کا کردار بھی شرمناک ہے جس کا محاسبہ کیا جانا چاہئے بدقسمتی سے وزیر اعظم کے بھارتیوں سے کاروباری تعلقات انہیں بھارتی جبر پر پوری قوت سے بات کرنے کی اجازت نہیں دیتے۔ علاوہ ازیں چیئرمین تحریک انصاف عمران خان نے مسلم لیگ کی حکومت کو ایک شعبے میں مبارکباد دی ہے۔ عمران خان نے کہا ہے کہ اقتصادی سروے کے مطابق گدھوں کی تعداد ایک لاکھ سالانہ کے حساب سے بڑھی ہے۔ مسلم لیگ (ن) کی حکومت کو اچھی کارکردگی پر مبارکباد دیتا ہوں۔
عمران