سیلز ٹیکس کی شرح میں کمی کی ضرورت

29 مئی 2017

مکرمی! آئندہ بجٹ میں نیا ٹیکس نہ لگانا اور صنعت کاروںوتاجروں کو مراعات کی تجاویز خوش آئند ہیں۔ٹیکسوں میں چُھوٹ سے کاروباری سرگرمیوں میں اضافہ ہوگا۔حکومت ٹیکس نیٹ میں اضافہ کرے تا کہ موجودہ ٹیکس دھندگان کے بوجھ میں کمی ہو ۔بجٹ میں سیلز ٹیکس کی شرح میں واضح کمی لائی جائے۔اسو قت آبادی کا تین فیصدحصہ موجودہ سیلز ٹیکس کی شرح میں حصہ ڈال رہا ہے جو کہ فطعاً ناکافی ہے۔حکومت سیلز ٹیکس کی شرح میں کمی کرے گی تو اس سے حکومت کو زیادہ ریونیو مل سکے گا اور عوام بخوشی ٹیکس کی ادائیگوں میں اپنا حصہ ڈالیں گے ۔آئند بجٹ میں بجلی و گیس کی قیمتوں میں کمی کی جائے ۔بے جا ٹیکس اور گیس و بجلی کی قیمتوں میں خطے کے دیگر ممالک کی نسبت اضافہ سے اشیاء کی پیداواری لاگت دن بدن بڑھ رہی ہے جس سے بالواسطہ طور پر عوام متاثر ہو رہے ہیں ۔ (چوھدری محمد اکمل چیمہ، سیالکوٹ کینٹ)