ایٹمی پاکستان کو درپیش چیلنجز

29 مئی 2017

مکرمی!28 مئی کا دن پاکستان کی تاریخ میں ایک سنگ میل کی حیثیت رکھتا ہے اس دن پاکستان عالم اسلام کی پہلی ایٹمی قوت بنا چاغی کے پہاڑوں پر یکے بعد دیگرے کئے گئے 5 ایٹمی دھماکوں کی گھن گرج نے انڈیا کے غرور کو خاک میں ملا دیا جو اس سے قبل آئے روز ہمیں دھمکاتا اور سبق سکھانے کی باتیں کیا کرتا تھا پاکستان کے دفاع کو ناقابل تسخیر بنانے میں یقینی طور پر وہ سوچ اور وہ عزم صمیم کارفرما ہے جب سابق وزیراعظم ذوالفقار علی بھٹو نے کہا تھا کہ ہم گھاس کھا لیں گے مگر ایٹم بم ضرور بنائیں گے ان کے اس خواب میں حقیقت کا رنگ نوازشریف نے بھرا تھا جو ایٹمی دھماکے کرتے وقت گومگو کیفیت سے دوچار تھے تاہم آبروئے صحافت جناب مجید نظامی نے اس وقت ایک تاریخی جملہ بولا تھا کہ میاں صاحب آپ دھماکہ کر دیں ورنہ یہ قوم آپ کا دھماکہ کر دے گی اور میں آپ کا دھماکہ کر دوں گا۔ پاکستان کا ایٹمی قوت بننا ایک قابل فخر کارنامہ ہے۔ اس پر 28 مئی کو یوم تکبیر ضرور بنائیں لیکن یہ بھی ذرا سوچیں کہ آخر وہ دن کب آئے گا جس دن پاکستان کی دامان تار تار کی بخیہ گری کے ئے ہمارے حکمرانوں کی جانب سے انقلاب آفریں اقدامات اٹھائے جائیں گے۔ (کامران نعیم صدیقی)