عراق : 4 بم دھماکے‘ سیاستدان سمیت 7 افراد ہلاک‘ 26 زخمی

29 مارچ 2010
بغداد (اے ایف پی) عراق کے صوبے الانبار میں چار بم دھماکوں میں ایک سیاست دان سمیت کم از کم سات افراد ہلاک اور بیس سے زائد زخمی ہو گئے۔ پولیس کے مطابق چاروں دھماکے قائم قصبے میں ترقی اور اصلاحات تحریک کے ایک رکن غنیم راضی کے گھر کے قریب سڑک پر ہوئے۔ ہلاک ہونیوالے سات افراد میں غنیم راضی اور اس کا بھائی بھی شامل ہیں۔ ترقی اور اصلاحات تحریک سابق وزیراعظم ایاد علاوی کی جماعت سیکولر عراقیہ کا ایک دھڑا ہے۔ سیکولر عراقیہ نے سات مارچ کو ہونے والے عام انتخابات میں سب سے زیادہ نشستیں حاصل کی ہیں۔دریں اثنا عراق میں پارلیمانی انتخابات کے ختمی نتائج کے اعلان کے بعد سابق وزیر اعظم ایاد علاوی نے اتحادی حکومت کے قیام کےلئے دیگر سیاسی جماعتوں سے بات چیت شروع کر دی ہے۔ ایاد علوی نے ایک نیوزکانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ وہ عراق میں ایک مضبوط حکومت کے خواہاں ہے جو عراقی عوام کی بہتری اور ملک میں امن وامان اور استحکام کیلئے دلیرانا فیصلے کرنے کی صلاحیت رکھتی ہو۔حکومت سازی کے لئے دیگر جماعتوں کے ساتھ بات چیت کا سلسلہ شروع کر دیا گیا ہے اور یہ صرف بات چیت تک محدود ہے اور کسی جماعت کے ساتھ مذاکرات نہیں ہورہے۔