A PHP Error was encountered

Severity: Notice

Message: Undefined index: category_data

Filename: frontend_ver3/Templating_engine.php

Line Number: 35

سمت صحیح ہونے کے باوجود طیارہ ریڈ زون میں کیسے چلا گیا؟

29 جولائی 2010
اسلام آباد (محمد نواز رضا۔ وقائع نگار خصوصی) کراچی سے اسلام آباد آنے والے ائیر بلیو طیارہ کے حادثہ کے بارے میں قیاس آرائیاں کی جا رہی ہیں لیکن سردست طیارے کا بلیک باکس نہیں ملا اس لئے یہ کہا جا سکتا ہے طیارہ حادثے کے بعد اپنے پیچھے کئی سوال چھوڑ گیا ہے۔ کیا اسلام آباد کا خراب موسم حادثے کا باعث بنا ہے؟ یا پھر انسانی غلطی کی وجہ سے طیارے کو حادثہ ہوا ہے۔ اسلام آباد ائرپورٹ کا شمار دنیا کے ان ممالک کے ہوائی اڈوں میں ہوتا ہے جن کا موسم اکثر و بیشتر خراب رہتا ہے۔ پائلٹس کو جہازوں کو ٹیک آف اور لینڈنگ کرتے ہوئے خاصی مشکلات کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔ اگرچہ حکومت نے ائرکموڈور خواجہ عبدالحمید کی سربراہی میں تحقیقاتی کمیٹی قائم کر دی ہے لیکن فوری طور پر حادثے کی وجوہات کا علم نہیں ہو سکتا۔ قبل ازیں پاکستان کے مختلف علاقوں میں ہونے والے فضائی حادثات کی تحقیقات رپورٹیں منظر عام پر نہیں آ سکیں، کیا اس حادثے کی تحقیقات کی رپورٹ بھی فائلوں کی نذر ہو جائے گی۔ سول ایوی ایشن کے ذرائع کے مطابق طیارہ لینڈنگ پوزیشن میں صحیح سمت پر تھا وہ ریڈ زون میں کیوں چلا گیا۔ سول ایوی ایشن کے ذرائع کے مطابق یہ سوال زیربحث ہے کہ جب سیاہ بادلوں نے اسلام آباد ائرپورٹ کو لپیٹ میں لے رکھا تھا جہاز کو لینڈنگ کیلئے کیوں گرین سگنل دیا گیا ہے۔ طیارہ رن وے سے کیوں دور ہوا؟ جب ہوائی اڈے پر رن وے کلیئر نہ ہوا تو جہاز کو فضاءمیں رہنے کی ہدایت کی جاتی ہے۔ جہاز کے ویل کھل چکے تھے اس سے ظاہر ہوتا ہے کہ جہاز لینڈنگ پوزیشن میں تھا۔