ہمارے بچوں کی طرف میلی آنکھ سے دیکھنے والے کسی رعایت کے مستحق نہیں : شہباز شریف

29 جنوری 2016

لاہور (خصوصی رپورٹر) وزیراعلیٰ شہباز شریف نے کہا ہے کہ سرکاری و نجی یونیورسٹیوں میں زیر تعلیم طلباءو طالبات اور اساتذہ کی حفاظت ہم سب کی مشترکہ ذمہ داری ہے جسے ہر حال میں نبھائیں گے۔ پنجاب حکومت فروغ تعلیم پر اربوں روپے کے وسائل صرف کر رہی ہے۔ طلباءو طالبات اور اساتذہ کی حفاظت کے لئے سکیورٹی انتظامات کے لئے وسائل میںکوئی کمی نہیں آنے دیں گے۔ وزیر اعلی نے یونیورسٹیوں میں سکیورٹی انتظامات کو مزید بہتر بنانے کے لئے جوائنٹ ایکشن کمیٹی کے قیام کا اعلان کرتے ہوئے کہا کہ کمیٹی میں متعلقہ وزرائ، سرکاری حکام اور وائس چانسلرز شامل ہوں گے۔ شہباز شریف نے ان خیالات کا اظہار پنجاب کی سرکاری و نجی یونیورسٹیوں کے وائس چانسلرز کے اجلاس سے خطاب میں کیا۔ وزیراعلی نے کہا کہ دہشت گردی کے خلاف جنگ پاکستان کی سلامتی اور بقا کی جنگ ہے۔ ہمیں مل کر دہشت گردی اور انتہا پسندی کے مخصوص مائنڈ سیٹ کو شکست دینا ہے۔ نظریاتی محاذ پر بھی پوری قوت سے لڑنا ہو گا۔ ہمارے بچوں کی طرف میلی آنکھ سے دیکھنے والے دشمن کسی رعایت کے مستحق نہیں- دشمن کے مذموم عزائم کو ناکام بنانے کے لئے ہاتھوں میں ہاتھ ملا کر آگے بڑھنا ہے۔ دہشت گردی اور انتہاپسندی کے خاتمے کے ساتھ نفرتوں اور مذہبی منافرت کو بھی ہمیشہ ہمیشہ کے لئے دفن کرنا ہو گا۔ علاوہ ازیں وزیراعلیٰ کی صدارت میں اجلاس صوبے کے سرکاری و نجی تعلیمی اداروں میں سکیورٹی انتظامات کا تفصیلی جائزہ لیا گیا۔ شہباز شریف نے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ قوم کے نونہالوں کو تعلیمی سرگرمیوں کو جاری رکھنے کیلئے سازگار ماحول بنانا حکومت کی ذمہ داری ہے، اس ضمن میں کوئی دقیقہ فروگزاشت نہ کیا جائے اور سرکاری و نجی تعلیمی اداروں میں وضع کردہ سکیورٹی پلان پر ہر قیمت پر عملدرآمد یقینی بنایا جائے۔ ایک اور اجلاس میں صحت عامہ کی سہولتوں میں بہتری کے لئے ہیلتھ سٹریٹجی کے اہم خدو خال کا تفصیلی جائزہ لیا گیا۔ شہباز شریف نے کہا کہ ہیلتھ سٹریٹجی پنجاب حکومت کی ترقیاتی حکمت عملی کا اہم ترین جزو ہے اورصحت عامہ کی بہترین سہولتوں کی فراہمی کیلئے ہیلتھ سٹرٹیجی پر عملدرآمد کر کے نتائج حاصل کئے جا سکتے ہیں۔ ادھر وزیر اعلیٰ سے ملاقات کے بعد سابق صوبائی وزیر اور تحریک انصاف کے رہنما چودھری شوکت داﺅد پی ٹی آئی چھوڑ کر مسلم لیگ ن میں شامل ہوگئے۔ علاوہ ازیںشہباز شریف نے سابق آڈیٹر جنرل سید حامد حسین شاہ کے انتقال پر گہرے دکھ اور افسوس کا اظہار کیا ہے۔ وزیراعلیٰ نے ہسپتال میں زیر علاج افسانہ نگار اور مایہ ناز ادیب انتظار حسین کو گلدستہ بھجوایا۔ وزیراعلیٰ نے کہا کہ انتظار حسین کے علاج معالجے کے اخراجات پنجاب حکومت برداشت کرے گی۔
شہباز شریف