کسانوں کے تحفظ کیلئے پھلوں کی درآمد پر 20 فیصد کسٹم ڈیوٹی لگائی گئی: چیئرمین ایف بی آر

29 جنوری 2016

اسلام آباد (اے پی پی) فیڈرل بورڈ آف ریونیو (ایف بی آر) کے چیئرمین نثار محمد خان نے کہا ہے کہ مقامی کسانوں اور زمیندار وں کے تحفظ کیلئے پھلوں کی درآمد پر 20 فیصد کسٹم ڈیوٹی عائد کی گئی ہے، سمگلنگ کی روک تھام کے لئے سرحد پر ٹریکرز اور سکینرز کے جدید نظام کی تنصیب سمیت مختلف اقدامات کئے جارہے ہیں، ایس آر اوز کے خاتمہ اور انتظامی امور میں بہتری سے کسٹم ڈیوٹی کی شرح نمو میں اضافہ ہوگیا ہے۔ وہ جمعرات کو یہاں سینیٹ کی قائمہ کمیٹی برائے خزانہ کو بریفنگ دے رہے تھے۔ قائمہ کمیٹی کا اجلاس چیئرمین کمیٹی سینیٹر سلیم ایچ مانڈوی والا کی زیر صدارت پارلیمنٹ ہائوس میں منعقد ہوا۔ سبزیوں کی درآمد پر کوئی ڈیوٹی نہیں ہے۔ سبزیوں کی ایران سے درآمد میں 91 فیصد کمی واقع ہوئی ہے۔ افغانستان سے پھل اور ڈرائی فروٹ درآمد ہوتا ہے۔ اراکین کمیٹی نے کہا امتیازی فرق کو ختم کیا جائے اور یکساں کسٹم ڈیوٹی لگائی جائے۔ سینیٹر طلحہ محمود نے 15 فیصد کسٹم ڈیوٹی لگانے کی تجویز دی۔ قائمہ کمیٹی کو سینٹ جیم ہوٹل اینڈ کلب کے معاملے کے حوالے سے چیئرمین ایف بی آر نے بتایاکہ ان معاملات کے حوالے سے انکوائر ی ہو رہی ہے ، 90 دن کے اندر رپورٹ ترتیب دے دی جائے گی۔