پاکستان، مالدیپ کا سیاحت، تجارت سمیت مختلف شعبوں میں تعاون بڑھانے پر اتفاق

29 جنوری 2016

اسلام آباد (این این آئی/آئی این پی) پاکستان اور مالدیپ نے سیاحت اور تجارت سمیت مختلف شعبوں میں تعاون بڑھانے پر اتفاق کیا ہے۔ مالدیپ کی وزیر خارجہ دنیا مامون نے وزیراعظم کے مشیر خارجہ سرتاج عزیز، معاون خصوصی طارق فاطمی سے الگ الگ ملاقات کی۔ مشیر خارجہ سرتاج عزیز نے دفتر خارجہ میں مہمان وزیر کا پرتپاک خیر مقدم کرتے ہوئے کہا پاکستان اور مالدیپ کے درمیان قریبی تعلقات باہمی احترام اور مشترکہ مفادات کی بنیاد پر قائم ہیں ملاقات کے دوران دونوں ممالک کے درمیان برادرانہ تعلقات پر اطمینان کا اظہار کیا گیا۔ فریقین نے تعلقات میں پیش رفت جاری رکھنے پر اتفاق کیا۔ بات چیت کے دوران علاقائی اور بین الاقوامی امور بھی زیر غور لائے گئے۔ مشیر خارجہ نے مالدیپ کی سیاحت کی انڈسٹری کی ترقی کو سراہتے ہوئے کہا پاکستان بھی اس شعبے میں مالدیپ سے تعاون کا فروغ چاہتا ہے۔ سر تاج عزیز نے مالدیپ کے صدر کے گزشتہ سال دورہ پاکستان کے موقع پر کھیلوں، صحت، تعلیم اور انسداد منشیات کے شعبوں میں طے پانے والی مفاہمت کی یادداشتوں اور معاہدوں پر پیش رفت کی ضرورت پر زور دیا۔ مالدیپ کی وزیر خارجہ نے دو طرفہ تعلقات کو عوامی رابطوں کے فروغ کے ذریعے مزید مستحکم کی ضرورت پر زور دیا۔ انہوں نے کہا طلبہ فنکاروں اور دیگر شعبوں کی شخصیات کے دوروں سے خیر سگالی کو فروغ حاصل ہو گا۔ ملاقات کے دوران طارق فاطمی نے دونوں ممالک کے درمیان دو طرفہ تجارت دستیاب مواقع کے مقابلے میں بہت کم ہے۔ انہوں نے معیشت اور تجارت کے شعبوں میں تعلقات کو مزید فروغ دینے کی ضرورت پر زور دیا اور سیاحت کے شعبے میں تعاون بڑھانے کی خواہش کا اظہار کیا۔ فریقین نے دو طرفہ تجارت کے فروغ کیلئے مواصلاتی روابط کو فروغ دینے پر اتفاق کیا۔ آئی این پی کے مطابق مالدیپ کی وزیر خارجہ دنیا مامون نے کہا ہے پاکستان آ کر بہت خوشی ہوئی دونوں ملکوں کے درمیان قریبی سفارتی تعلقات کو 50 سال ہو گئے ہیں۔ سرکاری ٹی وی چینل کو انٹرویو دیتے ہوئے کہا ملک میں مزید پاکستانی سیاحوں کی آمد کے خواہاں ہیں۔ مالدیپ باہمی تجارت سمیت مختلف شعبوں میں پاکستان سے تعاون بڑھانا چاہتا ہے، پاکستان کئی دہائیوں سے مختلف شعبوں میں مالدیپ کی مدد کر رہا ہے۔ 2004ءکے سونامی اور پچھلے سال پانی کے بحران میں پاکستان نے بھرپور مدد کی ہے۔ خطے میں امن و استحکام دونوں ملکوں کا مشترکہ مقصد ہے، پاکستان میں حالیہ دہشت گرد حملوں پر تعزیت اور ہمدردی کا اظہار کرتے ہیں۔ مالدیپی وزیر خارجہ نے کہا کہ اسلام اور دہشت گردی کو ایک ساتھ جوڑنے کی سخت مذمت کرتے ہیں، دہشت گردی کے خلاف جنگ میں پاکستان کی حکومت کے کردار کے معترف ہیں۔
پاکستان/ مالدیپ