سوزو و ساز رومی

29 جنوری 2016

نام مصنف:حضرت پیر عبدالطیف خان نقشبندی
معروف صوفی بزرگ اور مایہ ناز لکھاری سابق ڈائریکٹر محکمہ موسمیات پیر عبدالطیف خان نقشبندی کی کتاب ’’سازوسازرومی ‘‘شائع ہوگئی ہے ۔ کتاب چھیالیس ابواب پر مشتمل ہے ۔کتاب میںپڑھنے والے کو یہ بتایا گیا ہے کہ ملت کی خدمت میں حضرت مولانا رومی اورحضرت علامہ محمد اقبال کا کیا کردار ہے ۔جبکہ حضرت علامہ محمد اقبال کے روحانی مرشدمولانا روم کا فیضان کس طرح انکے ہاں موجود تھا اورہے ۔حضرت علامہ محمد اقبال کے ہاں جو مقام مولانا رومی کا تھا اس کو بھی بیان کیا گیا ہے ۔چھٹی صدی میں صوفی شاعروں کی بہت بڑی تعداد کے بارے میںبھی آگاہی فراہم کی گئی ہے ۔کتاب میں یہ بتایا گیا ہے کہ علامہ اقبال کے ہاں عشق کو عقل پر ترجیح دی گئی اورپھر اس کی وجوہات بھی بیان کی گئی ہیں۔پیر صاحب یہ بات ثابت کرنے کی کوشش کی ہے کہ عشق میں محبت ہوتی ہے خوف نہیں ہوتا اوراللہ تعالیٰ اپنے محبوب بندوں کی محبت انسانوں کے سینوں میں داخل کر دیتا ہے ۔کیونکہ قرآن پاک میں ہے کہ ’’لاخوف علیھم ولاھم یحزنون‘‘ ۔ترجمہ:(اولیاء اللہ کو)کوئی خوف اورغم نہیں ہوتا)اسی لیے تو مشائخ کی مخالفت کو ہلاکت قرار دیا گیا ہے ۔زیر نظر کتاب ’’سوزوسازرومی ‘‘مولانا رومی کے ہر شعر کے نیچے اس کا ترجمہ بھی دے دیا گیا ہے۔ یہ کتاب بھی ان احادیث کے گرد گھومتی ہے ۔یہ کتاب نشان منزل پبلی کیشنز داتا دربار مارکیٹ لاہور نے نہایت خوبصورت مجلد شائع کی۔ 605صفحات کی اس کتاب قیمت 500/-روپے ہے جو باذوق قارئین کیلئے زیادہ نہیں۔ (تبصرہ… جی این بھٹ)