متاثرین اورنج ٹرین کے احتجاج کے بعد ایوارڈ کا اعلان

29 جنوری 2016
متاثرین اورنج ٹرین کے احتجاج کے بعد ایوارڈ کا اعلان

لاہور سمن آباد میں اورنج لائن ٹرین منصوبے کے متاثرین نے شدید احتجاج کیا۔ مظاہرین کا مطالبہ تھا کہ گرائے جانیوالی املاک کا معقول معاوضہ دیا جائے۔
اورنج ٹرین منصوبے کی زد میں آنیوالی دکانیں، پلازے، مارکیٹیں اور گھر گرائے جا رہے ہیں۔ انتظامیہ نے 6 ماہ قبل گرائے جانیوالے مکانات پر نشان لگائے تھے اور مالکان کو زبانی نوٹس دیکر املاک منہدم کرنے کا بھی کہا تھا لیکن مالکان اس وقت تک اپنے گھروں اور مارکیٹوں کو گرانے کیلئے تیار نہیں جب تک حکومت انہیںمارکیٹ ریٹ کیمطابق مناسب معاوضہ نہ دے۔ گزشتہ روز موڑ سمن آباد پر اس منصوبے کیخلاف مظاہرہ کیا گیا جسکے بعد ایل ڈی اے حکام نے جائیدادوں کا معاوضہ دینے کے ایوارڈ کا اعلان کر دیا ہے۔ وہ تمام مالکان جن کے پاس ملکیتی کاغذات موجود ہیں وہ ایل ڈی اے کو مہیا کرنے پر انہیں دو روز بعد ادائیگی شروع ہو جائیگی اور جن لوگوں کے پاس ملکیتی کاغذات نہیں ہیں انکی موجودہ دستاویزات کی تصدیق کے بعد ہی انہیں معاوضہ کی ادائیگی کی جائیگی۔ حکومت نے ایک طریقہ واضح کر دیا ہے۔ لہذا متاثرین سڑکوں پر احتجاج کی بجائے ملکیتی ثبوت فراہم کریں یا بورڈ آف ریونیو کے خصوصی کائونٹر سے دستاویزات کی تصدیق کرا کر معاوضہ حاصل کریں۔ بہتر یہی ہے حکومت متاثرین کو کمرشل ریٹ پر معاوضہ دیکر مکان گرائے تاکہ یہ منصوبہ متنازعہ بننے سے بچ سکے۔