موجودہ پاکستان وڈیروں، جاگیرداروں، سرمایہ داروں کا ہے: سراج الحق

28 ستمبر 2014

ٹنڈو محمد خان (ایجنسیاں) امیر جماعت اسلامی پاکستان سراج الحق نے کہاہے کہ عوام نے پیپلز پارٹی اور مسلم لیگ (ن) کو ووٹ دیئے لیکن انکی حکومتیں عوام کے مسائل حل نہ کر سکیں ۔ موجودہ پاکستان میرا اور آپکا نہیں وڈیروں ، جاگیرداروں ، سرمایہ داروں ، مراعات یافتہ اشرافیہ کا ہے ۔ ہماری حکومت آئی تو جاگیرداری نظام کا خاتمہ کر کے ہاریوں ، غریبوں اور محنت کشوں میں زمین تقسیم کریں گے ۔ پاکستان اور سندھ کو تقسیم نہیں ہونے دیں گے، قائد اعظم  کے پاکستان کو مضبوط بنائیں گے ۔ نومبر میں جماعت اسلامی کے اجتماع عام میں ملک بھر کے تمام طبقات کو جمع کر کے نئی تحریک پاکستان کا آغاز کریں گے ۔ اسلام آباد کے حالات میں امید کی شمع روشن ہے جبکہ ملک کو حالت جنگ کی طرف دھکیلا جارہاہے ۔ دھرنوں کی سیاست ملک کیلئے ٹھیک نہیں ہے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے ٹنڈو محمد خان ،ماتلی اور ڈگری میں روڈ کارواں کے شرکاء سے خطاب اور میڈیا کے نمائندوں سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ سراج الحق نے کہاکہ سیاسی جرگہ نے اسلام آباد میں دھرنے والوں اور حکومت کو قریب لانے اور سیاسی ٹمپریچر کو کم کرنے میں بھر پور کردار ادا کیا ہے۔ مڈٹرم الیکشن مسائل کا حل نہیں، مسائل کا حل اسلامی نظام میں ہے۔ اگر نوازشریف نے دانشمندی اور مذاکرات کا راستہ اختیار نہیں کیا اور جذباتی پن کا راستہ اختیار کیا تو آئین اور جمہوریت ختم ہو سکتے ہیں۔ سندھ کی تقسیم نہیں چاہتے، اس وقت قوم کو جوڑنے کی ضرورت ہے، سندھ میں تقسیم کی بات عوام کی لڑائی کا سبب بن سکے گی، جو نظام چار صوبے نہیں چلا سکتا وہ بیس کیسے چلائے گا۔ بلدیاتی انتخابات وقت کی ضرورت ہیں۔ نواز شریف نے جنرل اسمبلی میں مسئلہ کشمیر کے حل پر زور دیا اور اپنا مقدمہ پرزور انداز میں پیش کیا، یہ بات قابل تعریف ہے۔

آئین سے زیادتی

چلو ایک دن آئین سے سنگین زیادتی کے ملزم کو بھی چار بار نہیں تو ایک بار سزائے ...