روپے کی گراوٹ‘ زرمبادلہ ذخائر میں کمی‘ سٹاک مارکیٹوں میں مندا جاری‘ سرمایہ کاری میں 19 ارب سے زائد کمی

28 نومبر 2013

کراچی+ لاہور (مارکیٹ رپورٹر + کامرس رپورٹر)کراچی اسٹاک ایکسچینج میں  مندی کا تسلسل جاری ،کاروباری ہفتے کے تیسرے روزبدھ کواتارچڑھائوکے بعدمحدود پیمانے پر مندی رہی تاہم کے ایس ای 100 انڈیکس 23700 کی نفسیاتی حدوپر مستحکم رہا۔ سرمایہ کاری مالیت میں19 ارب59 کروڑ روپے سے زائد کا اضافہ ۔ پاکستان کے غیر ملکی زرمبادلہ کے ذخائر میں بڑی حد تک کمی اور امریکی ڈالر کے مقابلے میں روپے کی گرتی ہوئی قدر کے باعث مقامی سرمایہ کار گروپ تذبذب کا شکار نظر آئے ۔ مارکیٹ کے اختتام پر کے ایس ای 100انڈیکس 30.35پوائنٹس کمی سے 23768.35 پوائنٹس پر بند ہوا ۔ مجموعی طور پر 340 کمپنیوں کے حصص کا کاروبار ہوا ، جن میں 144 کمپنیوں کے حصص کے بھاؤ میں اضافہ ،166 میں کمی جبکہ 30 کمپنیوں کے حصص کے بھاؤ میں استحکام رہا ۔ سرمایہ کاری مالیت میں19 ارب59 کروڑ56 لاکھ41 ہزار921 روپے کا اضافہ ریکارڈ کیا گیا  جبکہ سرمایہ کاری کی مجموعی مالیت بڑھ کر57 کھرب19ارب2 کروڑ 56لاکھ 96 ہزار982 روپے ہوگئی۔ لاہور سٹاک ایکسچینج میں بدھ کے روزمندی کا رجحان رہا - مجموعی طور پر91کمپنیوں کا کاروبار ہوا۔ 18 کمپنیوں کے حصص میں اضافہ۔16  کمپنیوں کے حصص میں کمی جبکہ57 کمپنیوں کے حصص میں استحکام رہا۔ ایل ایس ای 25 انڈیکس 11.50 پوائنٹس کی کمی کے ساتھ 4614.71 پربندہوا ۔