ایمان ،موجبِ نجات

28 نومبر 2013

حضرت رفاعہ جہنی رضی اللہ عنہ بیان فرماتے ہیں، ہم لوگ حضور اکرم صلی اللہ علیہ وسلم کے ساتھ ایک سفر سے واپس آرہے تھے، جب ہم قدید کے مقام پر پہنچے تو کچھ لوگ آپ سے اپنے گھر والوں کے پاس جانے کی اجازت طلب کرنے لگے، آپ انھیں اجازت عنایت فرمانے لگے لیکن پھرکھڑے ہوگئے ،پہلے آپ نے اللہ رب العزت کی حمد وثنا ءبیان کی پھر ارشاد فرمایا:اِ ن لوگوں کو کیا ہوگیا ہے کہ انہیں درخت کا وہ حصہ جو اللہ کے رسول کے قریب ہے ،دوسرے حصے سے زیادہ ناپسند لگ رہاہے۔یہ بات سنتے ہی سب پر گریہ طاری ہوگیا کوئی ایسا نظر نہیں آرہا تھا جو رو نہ رہا ہو۔حضرت ابوبکر صدیق رضی اللہ عنہ نے کہا:اس کے بعد جو اجازت طلب کرے گا وہ یقینا بڑا نادان ہوگا۔حضور علیہ الصلوٰة والسلام نے پھر اللہ کی حمد وثناءکی اور بشارت کی یہ بات فرمائی ”میں اللہ کے ہاں اس بات کی گواہی دیتا ہوں کہ جس بندے کی موت اس حال میں آجائے کہ وہ اس امر کی سچے دل سے گواہی دے رہا ہو کہ اللہ کے سواءکوئی معبود نہیں اورمیں اللہ کا رسول ہوںپھر وہ راہِ راست پر چلتا رہے تو وہ ضرور جنت میں داخل ہوگا۔میرے رب کریم نے مجھ سے وعدہ کیا ہے کہ وہ میری امت میں سے ستر ہزار آدمی بغیر حساب کتاب اورعذاب کے، جنت میں داخل کرے گااور مجھے امید ہے کہ تم لوگوں کے نیک ماں باپ اورنیک بیوی بچے (ان کی سفارش کی وجہ سے )پہلے جنت میں اپنے ٹھکانوں پر پہنچ جائیں گے اورپھر وہ ستر ہزار (مطمئن ہوکر ) جنت میں داخل ہوں گے۔(ابن ماجہ،احمد)
حضرت ابو موسیٰ رضی اللہ عنہ روایت فرماتے ہیں کہ حضور الصلوٰة والتسلیم نے فرمایا :جہنمی افراد جب جہنم میں اکٹھے ہوجائیں گے تو ان کے ساتھ کچھ قبلہ کو ماننے والے مسلمان بھی ہوں گے۔کافرمسلمانوں سے کہیں گے کیا تم مسلمان نہیں تھے؟وہ کہیں گے کیوں نہیں ہم تو مسلمان تھے،کفار کہیں گے تمہارے اسلام کا تمہیں کیا فائدہ ہوا جو تم بھی ہمارے ساتھ جہنم میں آگئے وہ جواب دیں گے ہمارے کچھ گناہ تھے جن کی وجہ سے ہم گرفت میں آگئے اورجہنم میں پھینک دیے گئے، اللہ کریم مسلمانوں کے اس جواب کو سنیں گے تو فرشتوں کو حکم دیں گے کہ جتنے بھی قبلہ کو ماننے والے مسلمان جہنم میں ہیں وہ سب اس میں سے باہر نکال دیے جائیں ، سو اس کی تعمیل ہوگی ۔ جب جہنم میں باقی رہ جانے والے کفار یہ منظر دیکھیں گے توکہیںگے،اے کاش! ہم بھی مسلمان ہوتے، تو جیسے یہ خلاصی پاگیے ہم بھی جہنم سے نجات پاجاتے ۔پھر حضور نے تعوذ پڑ ھ کر یہ آیات تلاوت فرمائیں ”آلرٰ،یہ آیتیں ہیں ایک کامل کتاب اورقرآن مبین کی کافر لوگ باربار تمنا کریں گے کیا خوب ہوتا اگر وہ مسلمان ہوتے“(الحجر ۲۔۱)(طبرانی)