ضلعی حکومت کے شعبہ کمرشلائزیشن میں کروڑوں روپے کے فراڈ کا انکشاف

28 نومبر 2013

لاہور (شعیب الدین سے) ضلعی حکومت لاہور کے شعبہ کمرشلائزیشن میں کروڑوں روپے کے ایک بڑے فراڈ کا انکشاف ہوا ہے جس میں ضلعی حکومت  کے شعبہ کمرشلائزیشن کے افسران نے بلڈنگ انسپکٹروں اور دیگر ماتحت  عملے کی ملی بھگت سے سرکاری خزانے کو کروڑوں  روپے کا نقصان پہنچایا ہے۔ ضلعی حکومت کے شعبہ کمرشلائزیشن  کے اس فراڈ کا تمام ریکارڈ محکمہ اینٹی کرپشن کے عملے نے قبضہ میں لے لا ہے۔ ذرائع کے مطابق صرف 10 عمارتوں کو قوانین کو اپنی مرضی سے استعمال کرکے تقریباً پونے دو کروڑ کا نقصان پہنچایا گیا ہے اور ایسی مزید بے شمار عمارتیں موجود ہیں جن کو کمرشلائز کرنے میں قواعدوضوابط کی بدترین خلاف ورزیاں کی گئی ہیں اور بلدیاتی قوانین کو اپنی مرضی سے استعمال کیا گیا ہے۔ سمن آباد چوک سے گلشن راوی جانے والی مرکزی سڑک پر گاڑیوں کے شو رومز کو کاغذات  اور قواعدوضوابط میں ہیرا پھیری کرکے ’’قانونی‘‘ کر دیا گیا ہے۔ باخبر ذرائع کے مطابق شعبہ کمرشلائزیشن کی آمدن مسلسل گر رہی تھی جس کا جواز پوچھنے پر بتایا جاتا تھا کہ حکومت نے کمرشلائزیشن  کے ریٹ کم کر دیئے ہیں جس کی وجہ سے آمدن کم ہو سکتی ہے مگر جب ریکارڈ چیک کیا گیا تو پتہ چلا کہ زمین کی قیمت کئی گنا کم ظاہر کرکے قواعدوضوابط کو اپنی مرضی سے استعمال کرکے سرکاری خزانے کو مسلسل کروڑوں روپے کا نقصان پہنچایا جا رہا ہے۔