21 ویں صدی کے مسائل 19 ویں صدی کے اوزاروں سے حل کر رہے ہیں : جسٹس افتخار

28 نومبر 2013

کراچی (وقت نیوز) چیف جسٹس افتخار محمد چودھری نے کہا ہے کہ قانون کی حکمرانی میں وکلاء کا کردار ناقابل فراموش ہے۔ یہ بات انہوں نے سندھ بار کونسل کی طرف سے اپنے اعزاز میں دیئے گئے الوداعی عشائیہ میں کہی۔ انہوں نے کہا کہ وکلاء آئین پر عمل اور اس کے احترام کی قسم کھاتے ہیں۔ آئین اور قانون کی محبت اور اس کی بحالی کا کریڈٹ وکلاء کو جاتا ہے۔ عدلیہ کی آزادی کیلئے وکلاء کا کردار اہم ہے۔ عدلیہ کی آزادی میں سندھ بار بارش کا پہلا قطرہ ثابت ہوئی۔ آئین کو جدید بنانے کی ضرورت ہے۔ عوام کو فوری انصاف کی فراہمی کی ضرورت ہے۔ مجھے یقین ہے کہ ججز عوام کو انصاف دینے کیلئے اپنا کردار ادا کرتے رہیں گے۔ بنچ اور بار مل کر انصاف کی فراہمی یقینی بنائیں۔ ہم 21ویں صدی کے مسائل کو 19ویں صدی کے اوزاروں سے حل کر رہے ہیں۔ ہمیں اپنا مائنڈ سیٹ تبدیل کرنا ہو گا۔ تمام وکلاء کا شکرگزار ہوں کہ انہوں نے انصاف کی بحالی میں میرا ساتھ دیا۔