حافظ آباد : گاڑی ٹھیک نہ کرنے پر سابق ایم این اے کے بھتیجے کا مکینک پر بہیمانہ تشدد

Aug 28, 2018

حافظ آباد (نمائندہ نوائے وقت) گاڑی ٹھیک نہ کرنے پر سابق ایم این اے کا بھتیجا اور مسلح محافظ موٹر مکینک کواٹھا کر ڈیرہ پر لے گئے اور وحشیانہ تشدد کا نشانہ بنایا جس سے موٹر مکینک کے دو دانت اور بازو ٹوٹ گیا۔ مظلوم شخص نے وزیر اعظم اور وزیر اعلیٰ سے واقعہ کا نوٹس لینے کا مطالبہ کیا ہے۔ محلہ بہاولپورہ کے محمد اسلم نے کسوکے بائی پاس کے قریب گاڑیوں کی ورکشاپ بنا رکھی تھی جہاں گذشتہ روز سابق ایم این اے اور تحریک لبیک کے امیدوار چودھری لیا قت عباس بھٹی کے بھتیجے اظہر بھٹی اور دیگر مسلح محافظوں نے اسے لیاقت عباس بھٹی کی گاڑی ٹھیک کرنے کو کہالیکن موٹر مکینک اسلم نے انکار کردیا جس پر مسلح محافظ اسے اٹھا کر ڈیرے پر لے گئے جہاں اسے ڈنڈوں،سوٹوں اور جوتوں سے سخت تشدد کا نشانہ بناتے رہے۔ تشدد کے باعث موٹر مکینک کی کمر اور پیٹھ پر بھی شدید زخم آئے۔مسلح محافظوں نے محنت کش کو نیم بیہوشی کی حالت میں پٹرول پمپ کے سامنے سڑک پرچھوڑ دیا۔ اسلم نے وزیر اعظم عمران خان اور وزیر اعلیٰ پنجاب عثمان بزدار واقعہ کا نوٹس لیتے ہوئے ذمہ داروں کیخلاف کارروائی کی اپیل کی۔ دوسری جانب اسلم کو ڈی ایچ کیو ہسپتال منتقل کر دیا گیا ۔

مزیدخبریں