مقبوضہ جموں کشمیر میں بھارتی ظلم و بربریت کو ایک سو گیارہ روز گزر گئے، بھارتی مظالم میں کمی آئی نہ کشمیریوں کا جذبہ کم ہو سکا

27 اکتوبر 2016 (15:04)

 کشمیر پر بھارتی فوج کے ناجائز قبضے کے خلاف یوم سیاہ منا رہے ہیں، سخت کرفیو کے باوجود بھی سرینگر، بارہمولا، اسلام آباد، پلوامہ، سوپور سمیت تمام دس اضلاع میں کشمیری سڑکوں پر آئے اور بھارتی قبضے کے خلاف شدید نعرہ بازی کی۔
کئی علاقوں میں بھارتی فوج اور مظاہرین میں زبردست تصادم بھی ہوا، مظاہرین کو منتشر کرنے کیلئے بھارتی فوج نے آنسو گیس اور پیلٹ گن کا استعمال کیا، جواب میں کشمیریوں نے قابض فوج پر پتھر برسائے، جھڑپوں کے دوران متعدد کشمیری زخمی بھی ہوئے۔ مقبوضہ وادی میں سرچ آپریشن کے نام پر پکڑ دھکڑ کا سلسلہ جاری ہے.
بھارتی دہشتگردوں نے بارہمولا میں ایک اور سکول نذر آتش کردیا، آٹھ جولائی سے اب تک سترہ سکولز نذر آتش کئے جاچکے ہیں، ادھر حریت رہنماؤں نے احتجاج میں تین نومبر تک توسیع کردی، کل کشمیری جامعہ مسجد کی طرف مارچ کریں گے، حریت رہنماؤں نے ہر صورت جامعہ مسجد میں نماز جمعہ ادا کرنے کا اعلان کیا ہے۔