عملہ کی ملی بھگت: نشتر سے ادویہ چوری، ڈسپنسر سمیت2 افراد پکڑے گئے

27 اکتوبر 2016
عملہ کی ملی بھگت: نشتر سے ادویہ چوری، ڈسپنسر سمیت2 افراد پکڑے گئے

ملتان (سٹاف رپورٹر) نشتر ہسپتال سے بھاری مقدار میں ادویات چوری ہونے کا انکشاف ہوا ہے‘ چوری پرائیویٹ افراد سرکاری عملے کی ملی بھگت سے کررہے تھے محمد طیب نامی شخص اور نشتر کا ڈسپنسر ارشد خلیل گزشتہ روز رنگے ہاتھوں پکڑے گئے دیگر پردہ نشینوں کے نام سامنے آنے کا قوی امکان ہے۔ تفصیل کے مطابق نشتر ہسپتال ملتان میں عرصہ دراز سے ادویات چوری کا سلسلہ جاری تھا اور انتظامیہ بے خبری کے باعث اقدامات کرنے سے قاصر تھی گزشتہ روز محمد طیب نامی شخص ادویات چوری کرتے ہوئے پکڑا گیا اور مذکورہ شخص نے پوچھ گچھ کے دوران بتایا کہ وہ تمام تر وارداتیں نشتر ہسپتال کے ڈسپنسر ارشد خلیل کی ملی بھگت سے سرانجام دیتا ہے جس پر ہسپتال انتظامیہ نے دونوں کیخلاف مقدمہ درج کرا دیا ہے۔ اس حوالے سے ذرائع کا کہنا ہے کہ اگر شفاف تحقیقات کی گئیں تو بعض اہم پوسٹوں پر تعینات پردہ نشینوں کے نام سامنے آنے کا امکان ہے۔